کیا کمارسنگا کارا کے اس عالمی ریکارڈ کو کوئی بلے بازدے پائے گا چیلنج؟

عالمی کپ کی تاریخ میں اب تک 8 بلے بازوں نے چاریا پھراس سے زیادہ سنچری لگائی ہیں۔

May 17, 2019 05:05 PM IST | Updated on: May 17, 2019 05:10 PM IST
کیا کمارسنگا کارا کے اس عالمی ریکارڈ کو کوئی بلے بازدے پائے گا چیلنج؟

کیا کمار سنگاکارا کا یہ عالمی ریکارڈ ٹوٹے گا؟ تصویر: ٹوئٹر

بے شک آئی سی سی کرکٹ عالمی کپ 2019 کا آغاز 30 مئی کوہوگا، لیکن کرکٹ کا یہ عظیم میلہ ابھی سے بحث کا سبب بنا ہوا ہے۔ سچ کہا جائے توہرکوئی عجیب وغریب ریکارڈوں کھنگالنے میں لگا ہوا ہے۔ اسی فہرست میں ہم آپ کو سری لنکائی بلے باز کمار سنگا کارا کے ایک ایسےعالمی ریکارڈ سے روبرو کرا رہے ہیں، جو کہ شاید ہی ٹوٹے۔ جی ہاں، یہ ایک ایسا ریکارڈ ہے، جسےعالمی کپ تاریخ میں کوئی نہیں انجام دے پایا ہے۔

اس بارانگلینڈ میں رنوں کا انبارلگنے کا پورا امکان ہے، لیکن کیا کوئی بلے باز سری لنکائی بلے بازکمارسنگاکارا کا عالمی کپ 2015 میں بنایا گیا ریکارڈ توڑ سکے گا۔ اس عظیم بلے بازنے اپنے آخری ونڈے ٹورنامنٹ میں 7 میچ کھیلتے ہوئے 108.20 کے اوسط سے چارسنچریوں کی مدد سے 541 رن ٹھوک کرہنگامہ مچا دیا تھا۔

Loading...

اس دوران ان کے بلے سے چارسنچریاں بنی تھیں، جو کہ ایک ایڈمیشن میں عالمی ریکارڈ ہے۔ اس عالمی کپ میں سنگاکارا نے بنگلہ دیش (ناٹ آوٹ 105)، انگلینڈ (117 ناٹ آوٹ)، آسٹریلیا (104 ) اوراسکاٹ لینڈ (124) نے قہربرپا کیا تھا۔ یہ ممکن ہے کہ اس ریکارڈ کو توڑپانا بہت مشکل ہے۔

یہ بلے بازلگاچکے ہیں تین سنچریاں

میتھیوہیڈن نے چار سنچری لگاکراپنی ٹیم کی جیت میں اہم تعاون دیا۔ تصویر: آئی سی سی

کمارا سنگاکارا سے پہلے عالمی کپ کے ایک سیشن میں آسٹریلیا کے مارک وا اورمیتھیو ہیڈن کے علاوہ ہندوستان کے سوربھ گانگولی نے تین تین سنچریاں لگانے کا ریکارڈ قائم کیا تھا۔ مارک وا نے 1996 عالمی کپ تو میتھیو ہیڈن نے 2007 عالمی کپ میں یہ کارنامہ انجام دیا تھا۔ جبکہ سوربھ گانگولی نے 2003 میں یہ کارنامہ انجام دیا تھا۔

سچن  سے ایک قدم پیچھے رہ گئے سنگاکارا

عالمی کپ کی تاریخ میں اب تک 8 بلے بازوں نے چاریا پھر اس سے زیادہ سنچریاں لگائی ہیں، اس فہرست میں سچن تندولکر (6) سب سے آگے ہیں توسنگاکارا اوررکی پونٹنگ کے نام 5-5 سنچریاں درج ہیں۔ اس کے علاوہ سوربھ گانگولی، اے بی ڈیویلیئرس، مارک وا، تلک رتنے دلشان اورمہیلا جے وردھنے نے چارچارسنچری لگائی ہیں۔ واضح ہے کہ مذکورہ بلے بازاپنے عالمی کپ کیریئرمیں چارسنچری ہی لگا سکے ہیں۔ وہیں کمارا سنگاکارا نے ایک ہی ایڈیشن میں چارسنچری لگادیئے۔ حالانکہ وہ چارباراس بڑے ٹورنامنٹ کا حصہ رہے ہیں۔

Loading...