ہندوستان سے شکست کے بعد خود کشی کرنا چاہتےتھے پاکستانی کرکٹ ٹیم کے کوچ

پاکستان کے کوچ مکی آرتھرنے کہا کہ ہندوستان کے خلاف شکست کے بعد تنقید سے ٹیم کافی مایوس تھی، لیکن ٹیم اب جوش سے لبریزہے۔

Jun 24, 2019 07:56 PM IST | Updated on: Jun 24, 2019 07:59 PM IST
ہندوستان سے شکست کے بعد خود کشی کرنا چاہتےتھے پاکستانی کرکٹ ٹیم کے کوچ

پاکستان کے کوچ مکی آرتھر۔

آئی سی سی کرکٹ عالمی کپ 2019 میں جنوبی افریقہ کوہرانےکے بعد پاکستان کے کوچ مکی آرتھرنے ٹیم کی جم کرتعریف کی ہے۔ انہوں نے میچ کے بعد کہا کہ ہندوستان کے خلاف شکست کے بعد تنقید سے ٹیم کافی مایوس تھی، لیکن ٹیم اب جوش سے لبریزہے۔ ساتھ ہی انہوں نےبتایا کہ ہندوستان سے شکست کے بعد وہ خود کشی کرنا چاہتے تھے۔ حالانکہ اس دوران وہ ایک صحافی کےسوال پربھڑک گئے اورانہوں نے میڈیا سے پاکستانی ٹیم کی اچھی باتیں لکھنےکوبھی کہا۔

اتوارکوجنوبی افریقہ کے خلاف اہم مقابلے میں پاکستان نے شاندارکارکردگی کا مظاہرہ کیا۔ جس کے بعد جنوبی افریقہ کی ٹیم کو شکست کا سامنا کرنا پڑا اوروہ عالمی کپ سے باہر ہوگئی۔ عالمی کپ میں اپنا دوسرا میچ کھیل رہےحارث سہیل نے جنوبی افریقہ کے خلاف 59 گیندوں میں 89 رن بنائے، جس سےٹیم نے50 اوورمیں 7 وکٹ کےنقصان پر308 رن لئے۔ محمد عامرنے 49 رن کے عوض دو وکٹ، وہاب ریاض نے 46 رن دے کرتین وکٹ اور شاداب خان نے 50 رن خرچ کرکے تین وکٹ حاصل کرکے جنوبی افریقہ کو9 وکٹ کے نقصان پر259 رنوں پرروک دیا۔ اس جیت سے پاکستان کے سیمی فائنل میں پہنچنے کی امیدیں برقرارہیں۔

Loading...

میچ کے بعد پریس کانفرنس میں ایک صحافی نے جب مکی آرتھرسے پوچھا کہ کیا آخری اووروں تک پہنچے پہنچتے حارث سہیل تھک گئے تھے؟ کیونکہ وہ قریب ہونے کے بعد بھی سنچری پوری نہیں کرپائے۔ اس پرپاکستانی کوچ ناراض ہوگئے۔ انہوں نےکہا کہ اس نے 59 گیندوں میں 89 رن کی اننگ کھیلی ہے۔ ایسی اننگ کافی وقت بعد دیکھنےکو ملی ہے۔ آپ لوگ اچھی باتیں کیوں نہیں لکھتے ہیں۔

مکی آرتھرنے کہا 'مجھےلگتا ہے کہ ہندوستان کے خلاف میچ کے بعد گزشتہ ہفتے کھلاڑی تھک گئے تھے۔ کھلاڑی میڈیا، عوام، سوشل میڈیا کے ردعمل سے مایوس تھےاوراب ہم امید کرتے ہیں کہ آج ہمیں ان سے مناسب اورمثبت ردعمل ملےگا۔ ہم نے کچھ دیرکےلئے کچھ لوگوں کا منہ بند کردیا ہے۔ گزشتہ اتوارکومیں خود کشی کرنا چاہتا تھا'۔ پاکستانی ٹیم اگراپنے باقی بچے تینوں میچوں جیت لیتی ہےاورباقی ٹیموں کےنتا ئج  بھی ان کے حق میں جاتے ہیں توٹیم سیمی فائنل میں جگہ بنا سکتی ہے۔

سابق فاتح پاکستان کوپوائنٹ ٹیبل میں ٹاپ پرچل رہے نیوزی لینڈ، افغانستان اوربنگلہ دیش کے خلاف کھیلنا ہے۔ مکی آرتھرنے کہا کہ پاکستان میں ٹورنامنٹ میں دنیا کی بہترین ٹیموں کو شکست دینےکی صلاحیت ہے۔ انہوں نے کہا کہ 'مجھے پتہ ہے کہ ہم نیوزی لینڈ کو ہراسکتے ہیں۔ ہم جوش سے لبریزہیں، اس میں کوئی شک نہیں ہے اوراگرہم اپنا بہترین کھیل دکھاتے ہیں توہم کسی کوبھی ہراسکتے ہیں۔ یہ چاہے نیوزی لینڈ ہو، افغانستان ہویا بنگلہ دیش ہو'۔

Loading...