سینئرسرکاری افسرکوآئی پی ایل کا پاس مانگنا مہنگا پڑا

بھارتیہ ریلوے خدمات کے مکینیکل انجنیئرنگ برانچ کے 1987 بیچ کے افسرگوپال کرشن گپتا فی الحال نئی اورقابل تجدید توانائی وزارت میں جوائنٹ سکریٹری کے طورپرکام کررہے تھے۔ 

May 11, 2019 06:10 PM IST | Updated on: May 11, 2019 06:10 PM IST
سینئرسرکاری افسرکوآئی پی ایل کا پاس مانگنا مہنگا پڑا

سینئرسرکاری افسرکوآئی پی ایل میچ کا پاس مانگنا مہنگا پڑا۔ تصویر: نیوز 18 لوکمت۔

آئی پی ایل میچ کے کے لئے کپلیمنٹری پاس مانگنا مہنگا پڑگیا۔ سینئرنوکوشاہ گوپال کرشن گپتا کو دہلی اینڈ ڈسٹرکٹ کرکٹ ایسوسی (ڈی ڈی سی اے) سے آئی پی ایل پاس مانگنے پرنہ صرف ان کے مدت کارکی مدت گھٹا دی گئی ہے بلکہ انہیں واپس ان کے کیڈر محکمہ ریل بھیج دیا گیا ہے۔

وزارت برائے عملہ کے ایک حکم میں کہا گیا کہ وزیراعظم نریندرمودی کی قیادت والی کابینہ کی تقرری کمیٹی (اے سی سی) نے گوپال کرشن گپتا کی وقت سے قبل واپسی کو فوری اثر سےمنظوری دے دی ہے۔ حالانکہ اس حکم کی وجہ نہیں بتائی گئی ہے۔ بھارتیہ ریلوے کی مکینیکل انجنیئرنگ برانچ (آئی آرایس ایم ای) کے1987 بیچ کےافسرگوپال کرشن گپتا فی الحال نئی اورقابل تجدید توانائی وزارت میں جوائنٹ سکریٹری کے طورپرکام کررہے تھے۔

 رجت شرما کو لکھا خط
Loading...

بتایا جارہا ہے کہ گوپال کرشن گپتا نےاسی سال مارچ میں ڈی ڈی سی اے کے چیئرمین رجت شرما کےدفترسےایک آئی پی ایل میچ کے لئےکمپلینٹری پاس مانگا تھا۔ ڈی ڈی سی اے سے کوئی جواب نہ ملنے پرگپتا نے چیئرمین رجت شرما کوتین اپریل کوایک خط لکھا۔ خط میں انہوں نےرجت شرما کی کارگزارمعاون سپنا سونی اوراپنے پرائیویٹ اسٹاف کے درمیان ٹیلی فون پرہوئی بات چیت کا ذکرکیا۔

اپنے خط میں گوپال کرشن گپتا نےلکھا 'میں نہیں جانتا کہ یہ حادثہ اورحادثے سے منسلک کڑیاں جیسا کہ اوپرذکرکیا گیا ہے، آپ کےعلم میں آئی ہیں یا نہیں اورآپ کی کارگزارمعاون نے پاس کا انتظام کرنے سے متعلق میری کال اورمیرے گزارش کے بارے میں آپ کو مطلع کیا یا نہیں'۔

Loading...