پاکستان جانے سےانکارکرنے پرسری لنکا کےکھلاڑیوں کو بورڈ نےدی 'سزا'۔

نروشن ڈکلیوا کو سری لنکا کرکٹ بورڈ نے کیریبین پریمیرلیگ (سی پی ایل -2019) میں کھیلنے کی اجازت نہیں دی ہے۔

Sep 10, 2019 07:50 PM IST | Updated on: Sep 10, 2019 08:04 PM IST
پاکستان جانے سےانکارکرنے پرسری لنکا کےکھلاڑیوں کو بورڈ نےدی 'سزا'۔

پاکستان جانے سےانکارکرنے پرسری لنکا کےکھلاڑیوں کو بورڈ نے دی 'سزا'۔

کولمبو: سری لنکا کے 10 کھلاڑیوں نے تحفظ سے متعلق تشویش ہونے پرپاکستان دورے پر جانےسےانکارکردیا تو اب ان کےاوپراس کا سائڈ افیکٹ ہونا شروع ہوگیا ہے۔ دراصل سری لنکا کرکٹ بورڈ نےبائیں ہاتھ کےبلےبازاوروکٹ کیپرنروشن ڈکویلا کوکیریبین پریمیرلیگ (سی پی ایل -2019 ) کھیلنےکی اجازت نہیں دی ہے۔ بورڈ نےانہیں این اوسی دینے سے انکارکردیا ہے۔ نروشن ڈکویلا کےبعد اب تشارا پریرا کوبھی کیریبین پریمیرلیگ میں کھیلنے کی اجازت نہیں ملےگی اورانہیں بھی ٹورنامنٹ سےباہرہونا پڑے گا۔ واضح رہےنروشن ڈکویلا اور تشارا پریرا دونوں ہی ان 10 کھلاڑیوں میں شامل ہیں، جنہوں نے پاکستان دورے پرجانے سےانکارکیا ہے۔

سری لنکا کرکٹ بورڈ کی دلیل

Loading...

کیریبین پریمیرلیگ (سی پی ایل-2019) کےلئےاین اوسی نہ دینے پرسری لنکا کرکٹ بورڈ کی دلیل ہےکہ وہ اپنےکسی کھلاڑی کوسیریزکےدوران دوسری لیگ میں کھیلنےکی اجازت نہیں دیتا ہے۔ سری لنکا کرکٹ بورڈ کے سی ای اوایشلے ڈی سلوا نےکہا کہ جس کھلاڑی کو کسی سیریزکےلئےنہیں منتخب کیا جاتا ہےاوراگروہ کھیلنےسےانکارکردے اوردوسری کرکٹ لیگ میں کھیلنےکےلئےاجازت مانگےتواسےاین اوسی نہیں دی جاتی ہے۔

نروشن ڈکویلا نہیں کھیل پائیں گے کیریبین پریمیرلیگ نروشن ڈکویلا نہیں کھیل پائیں گے کیریبین پریمیرلیگ

واضح رہےکہ تشارا پریرا اس وقت ویسٹ انڈیزمیں ہی ہیں اورکیریبین پریمیرلیگ کےدومیچ کھیل بھی چکے ہیں۔ وہ سینٹ لوسیا ٹیم کا حصہ ہیں۔ حالانکہ ان کی این اوسی اب منسوخ ہو سکتی ہےکیونکہ ان کےساتھ معاہدہ ہوا تھا کہ ونڈے اورٹی -20 سیریزکےدوران وہ لیگ نہیں سری لنکائی ٹیم سےکھیلیں گے۔ حالانکہ انہوں نے پاکستان جانے سےانکارکردیا ہےاوراب انہیں سری لنکا لوٹنا پڑسکتا ہے۔

پریرا کو سینٹ لوسیا ٹیم کا ساتھ چھوڑنا ہوگا۔ پریرا کو سینٹ لوسیا ٹیم کا ساتھ چھوڑنا ہوگا۔

 پاکستان جانےسےان کھلاڑیوں نےکیا انکار

اسی ماہ 27 ستمبرسے پاکستان کے دورے پرجانے والی سری لنکائی ٹیم کے جن 10 بڑے کھلاڑیوں نے پاکستان جانے سےانکارکیا ہے، ان میں لست ملنگا، اینجلومیتھیوزجیسے بڑے نام شامل ہیں۔ ان کےعلاوہ نروشن ڈکلیوا، کسل پریرا، دھنجیا ڈی سلوا، تشارا پریرا، اکل دھنجیا، سرنگا لکمل، دنیش چنڈی مل اوردمتھ کرونا رتنے نےبھی پاکستان جانے سےانکارکیا ہے۔

Loading...