نابالغ لڑکی کو ڈرا۔دھمکا کر سال بھر کرتا رہا ریپ، حاملہ ہونے پرزبردستی کرایا اسقاط حمل

نابالغ کا ریپ گزشتہ ایک سال سے کیا جارہا تھا۔ وہیں اس دوران نابالغ کے حاملہ ہونے پر اس کا جبراً اسقاط حمل کرایا گیا۔ اتنا ہی نہیں ملزم کی طرف سے نابالغ اور اس کے کنبے کو بھی دھمکی دی گئی۔

Jul 10, 2019 08:45 AM IST | Updated on: Jul 10, 2019 10:44 AM IST
نابالغ لڑکی کو ڈرا۔دھمکا کر سال بھر کرتا رہا ریپ، حاملہ ہونے پرزبردستی کرایا اسقاط حمل

اتراکھنڈ میں الموڑا ضلع کے چوکھٹیا علاقے میں نابالغ لڑکی سے گزشتہ ایک سال سے گھنونی کام کا سنسنی خیز معاملہ سامنے آیا ہے۔ ادھرچوکھٹیا کے دیہی علاقے میں نابالغ کے ریپ کے معاملہ میں پولیس نے ملزم کے خلاف پوکسو ایکٹ کے تحت معاملہ درج کرکے آگے کی کارروائی شروع کردی ہے۔

ضلع میں چوکھٹیا علاقے کے ایک گاؤں میں نابالغ کا ریپ گزرے ایک سال سے کیا جارہا تھا۔ وہیں اس دوران نابالغ کے حاملہ ہونے پر اس کا جبراً اسقاط حمل کرایا گیا۔ اتنا ہی نہیں ملزم کی طرف سے نابالغ اور اس کے کنبے کو بھی دھمکی دی گئی۔ پھر بھی متاثرہ کے والد نے کسی طرح سے ہمت جٹا کر ملزم کے خلاف پولیس میں معاملہ درج کروایا۔ پولیس نے تحریری شکایت کی بنیاد پر ملزم کے خلاف پوکسو ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کرلیا ہے۔

پولیس میں دی گئی اہل خانہ کی تحریرکے مطابق نابالغ کے ساتھ گاؤں کے ہی ایک شخص نے گزشتہ  اکتوبر 2018 سے فروری 2019 تک درندگی کی۔ اس کے بعد نابالغ کا جبراً اسقاط حمل کروادیا۔ اس میں ملزم کے بھائی سمیت کچھ دیگر لوگوں  نے ملزم کا ساتھ دیا تھا۔

وہیں معاملہ سامنے آنے کے بعد سے ہی علاقے میں ہنگامہ مچ گیا ہے۔ پولیس کارروائی شروع کرکے معاملے کی چھان بین میں مصروف ہوگئی ہے۔

Loading...

Loading...