علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کے طالب علم کے قتل کےبعد حالات کشیدہ

علی گڑھ: علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کےطالب علم کے قتل کےبعدپیدا ہوئی کشیدگی کے پیش نظر احتیاط کےطو رپر حفاظتی انتظامات سخت کردیئے گئے ہیں

Sep 19, 2015 06:05 PM IST | Updated on: Sep 19, 2015 06:05 PM IST
علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کے طالب علم کے قتل کےبعد حالات کشیدہ

علی گڑھ: علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کےطالب علم کے قتل کےبعدپیدا ہوئی کشیدگی کے پیش نظر احتیاط کےطو رپر حفاظتی انتظامات سخت کردیئے گئے ہیں۔پولیس نے آج یہاں بتایا کہ سہارن پور کے رہنے والے عالم گیر پر موٹر سائیکل پر سوار لڑکوں نے فائرنگ کی تھی، جس کی کل دیر رات میڈیکل کالج میں موت ہوگئی ۔ طالب علم کے قتل سےطلبا میں شدید غم وغصہ تھا اور رات بھر یونیورسٹی میں افراتقری کا ماحول رہا۔

اس دوران اے ایم یو کے وائس چانسلر ضمیر الدین نے آج کے لئے یونیورسٹی سطح کی کلاسوں کو معطل کرنے کا اعلان کیا۔ یونیورسٹی کےباہر احتیاط کے طور پر پی اے سی کی ایک کمیٹی اور آٹھ تھانہ انچارج تعینات کئے گئے ہیں۔پولیس نے بتایا کہ مقتول طالب علم کے بڑے بھائی جہانگیر نے آج پانچ طلبا کے خلا ف رپورٹ درج کرائی ہے۔ جس میں تین نامزد ریحان، شاداب اور مبین اعظم گڑھ اور بجنور کے رہنے والے ہیں۔

Loading...

Loading...