آر جے ڈی ایم ایل اے پر نابالغ لڑکی کو رات میں بلانے کا الزام، اب پولیس کر رہی ہے یہ کارروائی

دراصل گزشتہ 6 ستمبر کو نابالغ متاثرہ نے 164 کے دوبارہ بیان میں ایم ایل اے ارون یادو کا نام لیا تھا اور سیکس ریکٹ میں ان کی شمولیت اجاگر کی تھی۔ اس کے بعد سے ہی ایم ایل اے غائب ہو گئے ہیں۔

Sep 19, 2019 10:58 AM IST | Updated on: Sep 19, 2019 10:59 AM IST
آر جے ڈی ایم ایل اے پر نابالغ لڑکی کو رات میں بلانے کا الزام، اب پولیس کر رہی ہے یہ کارروائی

سیکس ریکٹ کیس میں پھنسے آر جے ڈی ایم ایل اے ارون یادو پر پولیس کی دبش بڑھتی جارہی ہے۔

سیکس ریکٹ کیس میں پھنسے آر جے ڈی ایم ایل اے ارون یادو پر پولیس کی دبش بڑھتی جارہی ہے۔ پولیس کی ٹیم نے بدھ کی دیر شام پٹنہ اور بھوجپور کے لساڑی گاؤں میں ان کی رہائش گاہ پر چھاپہ ماری کی لیکن ایم ایل اے فرار ملے۔ اس درمیان خبر ہے کہ ایم ایل اے کی گرفتاری نہیں ہونے کی صورت میں پولیس ان کی املاک کی قرقی کی اجازت کیلئے کورٹ جانے کی تیاری کر رہی ہے۔

غور طلب ہے کہ بدھ کو چھاپہ ماری کے دوران ایف ایس ایل کی ٹیم نے پہلی مرتبہ پٹنہ میں واقع ایم ایل اے کی رہائش گاہ کی سائنسی طور سے جانچ کی۔ ایف ایس ایل کی 6 رکنی ٹیم تقریبا گھنٹے بھر ایم ایل اے کی سرکاری رہائش گاہ پر موجود رہی۔ حالانکہ جانچ میں کیا کچھ ملا اسے لیکر ایف ایس ایل ٹیم کے افسر کچھ بھی بولنے کو تیار نہیں تھے۔

دراصل گزشتہ 6 ستمبر کو نابالغ متاثرہ نے 164 کے دوبارہ بیان میں ایم ایل اے ارون یادو کا نام لیا تھا اور سیکس ریکٹ میں ان کی شمولیت اجاگر کی تھی۔ اس کے بعد سے ہی ایم ایل اے غائب ہو گئے ہیں۔ وہیں 16 ستمبر کو تحقیقاتی افسر کی درخواست پر آرا میں واقع پوکسو کورٹ نے ملزم ایم ایل اے ارون یادو کے خلاف اشتہار وارنٹ جاری کرنے کا حکم دیا تھا۔

RJD MLA

Loading...

حالانکہ ایم ایل اے کے وکیل نے اس معاملے میں پوکسو کورٹ سے کچھ دنوں کی مہلت مانگی تھی جسے عدالت نے خارج کردیا تھا۔ بہر حال بدھ کو اشتہار چسپاں کرنے کے بعد بھوجپور پولیس قرقی ضبطی کی کارروائی کیلئے درخواست دینے میں مصروف ہوگئی ہے۔

 

Loading...