سیکس ریکیٹ کیس : نابالغ متاثرہ نے لیا آر جے ڈی ممبر اسمبلی کا نام ! ، کبھی بھی ہوسکتی ہے گرفتاری

آرا اور پٹنہ سے وابستہ مشہور سیکس ریکیٹ کیس میں آر جے ڈی کے ایک ممبر اسمبلی پر گرفتاری کی تلوار لٹک رہی ہے ۔ بتایا جارہا ہے کہ انہیں کبھی بھی گرفتار کیا جاسکتا ہے ۔

Sep 11, 2019 10:24 PM IST | Updated on: Sep 11, 2019 10:24 PM IST
سیکس ریکیٹ کیس : نابالغ متاثرہ نے لیا آر جے ڈی ممبر اسمبلی کا نام ! ، کبھی بھی ہوسکتی ہے گرفتاری

علامتی تصویر

آرا اور پٹنہ سے وابستہ مشہور سیکس ریکیٹ کیس میں آر جے ڈی کے ایک ممبر اسمبلی پر گرفتاری کی تلوار لٹک رہی ہے ۔ بتایا جارہا ہے کہ انہیں کبھی بھی گرفتار کیا جاسکتا ہے ۔ پولیس ذرائع سے موصولہ خبر کے مطابق نابالغ متاثرہ نے دفعہ 164 کے تحت دوبارہ عدالت میں درج کرائے اپنے بیان میں آر جے ڈی ممبر اسمبلی کا نام لیا ہے ۔

غور طلب ہے کہ اس معاملہ میں جانچ افسر انسپکٹر چندر شیکھر گپتا نے درخواست دے کر عدالت سے سیل بند لفافے میں درج بیان کی کاپی لی اور اس کو ایس پی دفتر کو سونپ دیا ۔ بتایا جارہا ہے کہ متاثرہ نے عدالت میں دئے اپنے بیان میں آر جے ڈی کے ایک ممبر اسمبلی کا نام لیا ہے ۔

Loading...

اطلاعات کے مطابق آرا پولیس عدالت میں گرفتاری وارنٹ کیلئے عرضی دینے جاری ہے ۔ ایک افسر کے مطابق متاثرہ نے اپنے بیان میں براہ راست طور پر الزام لگایا ہے ، اس لئے پولیس وارنٹ کے بغیر بھی گرفتاری کرسکتی ہے ۔

غور طلب ہے کہ نابالغ متاثرہ گزشتہ 18 جولائی کو پٹنہ میں چل رہے سیکس ریکیٹ کے چنگل سے کسی طرح آزاد ہوکر بھوجپور پولیس کے پاس پہنچی تھی ۔ متاثرہ نے بتایا تھا کہ اس کو پٹنہ میں ایک انجینئر اور ایک ممبر اسمبلی کی رہائش گاہ پر بھیجا جاتا تھا ۔

رہائش گاہ نمبر کی بنیاد پر الزامات کے گھیرے میں آئے آر جے ڈی کے ممبر اسمبلی نے اس وقت وضاحت پیش کرتے ہوئے سیکس ریکیٹ میں شامل ہونے سے انکار کردیا تھا ، لیکن سیکس ریکیٹ چلانے والی خاتون نے لڑکی کو ممبر اسبملی کی رہائش گاہ پر بھیجے جانے کی بات کا اعتراف کرلیا تھا ۔ تقریبا ایک ماہ تک ٹھنڈے بستہ میں پڑا رہا یہ معاملہ اب متاثرہ کے عدالت میں بیان دینے کے بعد پھر سرخیوں میں ہے ۔

Loading...