دلت نابالغ لڑکی کی اجتماعی عصمت دری، ایم ایم ایس بھی بنایا

مدھیہ پردیش کے ضلع مرینا میں ایک دلت نابالغ لڑکی کا اغوا کرکے اس کی اجتماعی عصمت دری کرنے اور ایم ایم ایس بنانے کا معاملہ سامنے آیا ہے۔

Jul 15, 2015 04:31 PM IST | Updated on: Jul 15, 2015 04:32 PM IST
دلت نابالغ لڑکی کی اجتماعی عصمت دری، ایم ایم ایس بھی بنایا

مرینا۔  مدھیہ پردیش کے ضلع مرینا میں ایک دلت نابالغ لڑکی کا اغوا کرکے اس کی اجتماعی عصمت دری کرنے اور ایم ایم ایس بنانے کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ تقریباََ 20دن قبل ہوئے اس واقعہ کے منگل کو سامنے آنے کے بعد ضلع کے پولیس سپرنٹنڈنٹ کی ہدایت پر امباہ تھانہ کی پولیس نے اغوا اور اجتماعی عصمت دری کا معاملہ درج کرکے ملزمین کی تلا ش شروع کردی ہے۔ پولیس ذرائع نے بتایا کہ امباہ قصبے میں رہنے والی سولہ سالہ کی ایک دلت لڑکی کو وشنو پرما ر(23 )نامی شخص بہلا پھسلاکر ساتھ لے گیا اور تین چار دن اپنے ساتھ رکھنے کے بعد چھوڑ دیا۔لڑکی نے گھر والوں کو بتایا کہ وشنو اور اس کے دو ساتھیوں نے اس کی عصمت دری کی لیکن انہوں نے بدنامی کے ڈر سے پولیس سے شکایت نہیں کی۔ چند روز بعد پتہ چلا کہ ملزم وشنو نے لڑکی کا فحش ایم ایم ایس بھی بنایا تھا اور اس نے اسے دکھاکر لڑکی کو بلیک میل کرنا شروع کردیا۔ ملزم کی دھمکیوں سے پریشان ہوکر لڑکی کے گھر والوں نے منگل کو مرینا کے پولیس سپرنٹنڈنٹ ونیت کھنہ کو سارامعاملہ بتایا جسکے بعد ان کی ہدایت پر امباہ تھانہ میں وشنو او اس کے دیگر دو ساتھیوں کے خلاف اجتماع عصمت دری کا معاملہ درج کیا۔ پولیس نے اس گاڑی کے ڈرائیور کے خلاف بھی معاملہ درج کیا ہے جس میں بٹھاکر لڑکی کو لے جایا گیا تھا۔

Loading...

Loading...