دربھنگہ قتل کیس : ایس پی نے تھانہ انچارج کو معطل کیا ، تحقیقات کے لیے پہنچی ایس آئی ٹی کی ٹیم

دربھنگہ : بہار کے دربھنگہ میں پرائیویٹ کنسٹرکشن کمپنی کے دو انجینئروں کا گولی ماکر قتل کے معاملے میں پولیس کے رول پر بھی سوالات کھڑے ہو رہے ہیں۔ قتل کے بعد ضلع کے ایس پی اے کے ستیارتھی نے کارروائی کی ہے۔ ایس پی نے کارروائی کرتے ہوئے لاپروائي برتنے کے معاملے میں بهیرا کے تھانہ انچارج راماشنكر سنگھ کو معطل کر دیا ہے۔

Dec 27, 2015 12:43 PM IST | Updated on: Dec 27, 2015 12:43 PM IST
دربھنگہ قتل کیس : ایس پی نے تھانہ انچارج کو معطل کیا ، تحقیقات کے لیے پہنچی ایس آئی ٹی کی ٹیم

دربھنگہ : بہار کے دربھنگہ میں پرائیویٹ کنسٹرکشن کمپنی کے دو انجینئروں کا گولی ماکر قتل کے معاملے میں پولیس کے رول پر بھی سوالات کھڑے ہو رہے ہیں۔ قتل کے بعد ضلع کے ایس پی اے کے ستیارتھی نے کارروائی کی ہے۔ ایس پی نے کارروائی کرتے ہوئے لاپروائي برتنے کے معاملے میں بهیرا کے تھانہ انچارج راماشنكر سنگھ کو معطل کر دیا ہے۔

اس معاملے میں پولیس کا کہنا ہے کہ بدنام زمانہ مجرم مکیش پاٹھک کی طرف سے رنگداری مانگی گئی تھی۔ مکیش اس سے پہلے بھی ضلع میں کئی وارداتوں کو انجام دے چکا ہے۔ معاملے کی جانچ کی ذمہ داری ایس آئی ٹی کو سونپ دی گئی ہے۔ مجرموں کی گرفتاری کیلئے ایس ٹی ایف ایس پی شیوديپ لانڈے اور ان کی ٹیم کیس سے جڑے نکات کی چھان بین کررہی ہے۔

ایک انگریزی اخبار دی ٹیلی گراف میں شائع خبر کے مطابق 20 دسمبر کو بدنام زمامہ سنتوش جھا کی گینگ سے دھمکی ملنے کے بعد ایس ایس پی نے دونوں کو سیکورٹی دے دی تھي ، لیكن جمعہ کی صبح بهیڑا تھانہ انچارج نے کسی ضروری کام کا حوالہ دے کر سیکورٹی ہٹا لی اور اسی دن دونوں کو گولیوں سے بھون دیا گیا۔

اخبار کے مطابق بدنام زمانہ سنتوش جھا اس وقت سیتامڑھی کی جیل میں بند ہے۔ جس شوٹر مکیش پاٹھک نے اس قتل کو انجام دیا ہے، وہ 2014 میں لوک سبھا الیکشن لڑنے کی بھی تیاری کر رہا تھا۔

Loading...

غور طلب ہے کہ دربھنگہ میں ایک نجی سڑک تعمیراتی کمپنی کے دو انجینئرز کو مجرموں نے دن دہاڑے گولی مار کر قتل کر دیا تھا ۔ یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب دربھنگہ کے بھیری میں انجینئر سڑک کی تعمیر کرا رہے تھے۔ موٹرسائیكل سوار بدمعاشوں نے دونوں کو گولی مار کر قتل کر دیا۔

تعمیراتی کمپنی کے مطابق تین دن پہلے کمپنی سے رنگداری مانگی گئی تھی اور نہ دینے پر جان سے مارنے کی دھمکی دی گئی تھی۔

Loading...