سپا سینٹر کی آڑ میں چل رہا تھا جسم فروشی کا دھندہ ، اس حالت میں ملے لڑکے اور لڑکیاں

سی آئی اے ریواڑی کی ٹیم نے سپا سینٹر کی آڑ میں چل رہے جسم فروشی کے دھندہ کا پردہ فاش کیا ۔ سپا سینٹر سے چھ لڑکیوں کے علاوہ 8 لوگوں کو گرفتار کیا گیا ہے ۔

Jul 17, 2019 11:33 PM IST | Updated on: Jul 19, 2019 07:00 PM IST
سپا سینٹر کی آڑ میں چل رہا تھا جسم فروشی کا دھندہ ، اس حالت میں ملے لڑکے اور لڑکیاں

علامتی تصویر

ہریانہ میں سی آئی اے ریواڑی کی ٹیم نے شہر کے لیو چوک پر واقع ایک سپا سینٹر پر منگل کی شام بڑی کارروائی کی ۔ سی آئی اے ریواڑی کی ٹیم نے سپا سینٹر کی آڑ میں چل رہے جسم فروشی کے دھندہ کا پردہ فاش کیا ۔ سپا سینٹر سے چھ لڑکیوں کے علاوہ 8 لوگوں کو گرفتار کیا گیا ہے ۔

گرفتار افراد میں سپا سینٹر چلانے والا گوکل گڑھ کا رہائشی ٹھاکر داس اور اس کی خاتون ساتھی بھی شامل ہے ۔ گرفتار کئے گئے سبھی لوگوں کو میڈیکل ٹاون تھانہ پولیس کے حوالے کردیا گیا ہے ۔ ماڈل ٹاون تھانہ پولیس اگلی کارروائی میں مصروف ہے ۔ ایس پی نازنین بھسین کو اطلاع ملی تھی کہ لیو چوک پر اے نیو سپا سینٹر میں جسم فروشی کا دھندہ ہوتا ہے ۔ ایس پی نے فورا سی آئی اے ریواڑی کے انچارج کو کارروائی کا حکم دیا ۔

Loading...

سی آئی اے انچارج ودیا ساگر نے اپنی ٹیم کے ساتھ مل کر منگل کی شام سپا سینٹر پر چھاپہ مارا ۔ اس دوران چھ لڑکیوں کے علاوہ 8 لوگ قابل اعتراض حالت میں ملے ۔ سی آئی اے ٹیم نے جائے واقعہ پر موجود سبھی لوگوں کو گرفتار کرلیا ، جس کے بعد انہیں ماڈل ٹاون تھانہ میں لے جایا گیا ۔ ماڈل ٹاون تھانہ پولیس معاملہ کی کارروائی کررہی ہے ۔ ایس پی نازنین بھسین نے کہا کہ ضلع میں کسی طرح کا غیر قانونی دھندہ نہیں چلنے دیا جائے گا ۔

پولیس کا کہنا ہے کہ جرائم کو روکنا اور مجرموں پر نکیل کسنا ان کی اولین ترجیح ہے ۔ انہوں نے کہا کہ غیر قانون دھندوں میں ملوث لوگوں کو کسی بھی حالت میں بخشا نہیں جائے گا ۔ اس طرح کا دھندہ کرنے والے لوگوں کے خلاف مسلسل کارروائی جاری رہے گی ۔

Loading...