خاتون پروفیسرکی برہنہ ویڈیو بناکر ہراساں کرنے والا نوجوان گرفتار

خاتون پروفیسرکی عریاں ویڈیو بناتے ہوئے اس کو ہراساں کرنے والے اے پی کے طالب علم کو چینئی پولیس نے گرفتار کرلیا۔

Sep 25, 2019 06:26 PM IST | Updated on: Sep 25, 2019 06:26 PM IST
خاتون پروفیسرکی برہنہ ویڈیو بناکر ہراساں کرنے والا نوجوان گرفتار

علامتی تصویر

خاتون پروفیسرکی عریاں ویڈیو بناتے ہوئے اس کو ہراساں کرنے والے اے پی کے طالب علم کو چینئی پولیس نے گرفتار کرلیا۔ تفصیلات کے مطابق آندھراپردیش سے تعلق رکھنے والا 23سالہ نوجوان تمل ناڈو کے مہابلی پورم میں ایک پرائیویٹ یونیورسٹی میں انجینئرنگ کی تعلیم حاصل کررہا تھا۔ اسی یونیورسٹی میں اے پی سے ہی تعلق رکھنے والی 25سالہ لڑکی،پروفیسر کے طورپر خدمات انجام دے رہی تھی۔ دونوں کا تعلق اے پی کے ایک ہی مقام سے تھا۔عمر میں زیادہ فرق نہ ہونے پر ان دونوں کی دوستی ہوگئی۔

تعلیم کی تکمیل کے بعد پارٹی دینے کے بہانے وویش نامی یہ نوجوان اس خاتون پروفیسر کو اپنی بائیک پر لے گیا۔ اس نے سنسنان مقام لے جاکر بائیک کو روک دیا اور چاقو سے دھمکا کر اس کے کپڑے اتروائے اور اس کی عریاں تصاویر اپنے سیل فون میں لے لیں اور بعد ازاں اس کو ہاسٹل میں چھوڑ دیا اور اس واقعہ کے انکشاف کے خلاف انتباہ بھی دیا۔

Loading...

دوسرے دن بھی اس نے فون کرتے ہوئے دھمکی دی جس پر پروفیسر نے پولیس سے شکایت کی۔پولیس نے اس سلسلہ میں ایک معاملہ درج کرکے اس نوجوان کو گرفتار کرلیااور اس کے سیل فون سے ویڈیو کو حذف کردیا۔

Loading...