گیا سے پٹنہ بلا کر سب انسپکڑ کی بیوی کی ہوٹل میں اجتماعی آبروریزی ، کیس درج ، دو گرفتار

بہار کے گیا ضلع کی رہنے والی خاتون کی پٹنہ کے ایک ہوٹل میں اجتماعی آبروریزی کا معاملہ سامنے آیا ہے ۔ اس سلسلہ میں پولیس نے دو ملزمین کو گرفتار کیا ہے ۔

Sep 27, 2019 05:15 PM IST | Updated on: Sep 27, 2019 05:15 PM IST
گیا سے پٹنہ بلا کر سب انسپکڑ کی بیوی کی ہوٹل میں اجتماعی آبروریزی ، کیس درج ، دو گرفتار

علامتی تصویر

بہار کے گیا ضلع کی رہنے والی خاتون کی پٹنہ کے ایک ہوٹل میں اجتماعی آبروریزی کا معاملہ سامنے آیا ہے ۔ اس سلسلہ میں پولیس نے دو ملزمین کو گرفتار کیا ہے ۔ یہ واقعہ گزشتہ ماہ اگست میں پیش آیا ۔ اطلاعات کے مطابق متاثرہ خاتون ایک بیٹے کی ماں ہے اور شوہر کی موت ہوچکی ہے ۔ اس کا شوہر بہار پولیس میں سب انسپکٹر تھا ۔ شوہر کی موت کے بعد متاثرہ کام کے سلسلے میں ملزمین کے رابطے میں آئی تھی جو اس کے ہی گھر میں کرایہ پر رہنے کیلئے آیا تھا ۔ خاتون کا الزام ہے کہ کام کا لالچ دے کر ملزمین نے اس سے دوستی بنائی اور پھر کئی مرتبہ پیسے بھی لئے ۔ اس دوران ملزمین نے کام دلانے کی بات کہہ کر خاتون کی کئی لوگوں سے ملاقات بھی کروائی ۔

متاثرہ نے بتایا کہ ملزمین نے بعد میں اسی جگہ کام پر لگوادیا تھا ، جہاں وہ خود نوکری کرتا تھا ۔ پھر ملزمین بہانے بناکر اس کو الگ الگ جگہ بلاتا تھا ، لیکن متاثرہ انکار کردیتی تھی ۔ اس کے بعد ایک دن کام کا بہانہ بناکر ملزم نے اس کو پٹنہ کے ایک ہوٹل میں بلایا ۔ راجدھانی کے راجا بازار میں واقع ہوٹل میں متاثرہ کی اجتماعی آبروریزی کی گئی ۔

Loading...

متاثرہ خاتون نے جن تین افراد کے خلاف اجتماعی آبروریزی کا الزام لگایا ہے ، وہ سبھی شہر کے ہی ہیلتھ کیئر کمپنی میں کام کرتے ہیں ۔ متاثرہ خاتون نے خاتون تھانہ میں اجتماعی آبروریزی کی تحریری ایف آئی آر درج کروائی ہے ، جس کے بعد متاثرہ کو میڈیکل کیلئے بھیج دیا گیا ۔ پولیس نے تینوں ملزمین کو حراست میں لے کر ان سے گھنٹوں پوچھ گچھ کی ، جس کے بعد جمعرات دیر رات ان میں سے دو کو گرفتار کرلیا گیا ۔ فی الحال پولیس اس معاملہ میں کچھ بھی بولنے سے گریز کررہی ہے ۔ وہیں ملزمین نے خود کو بے قصور بتایا ہے ۔

Loading...