آبروریزی متاثرہ نابالغ لڑکی نے بچی کو دیا جنم تو پولیس آئی حرکت میں ، کھلا راز تو سب رہ گئے حیران

راجستھان کے دوسا ضلع کے لال سوٹ سب سیکشن کے رام گڑھ پچوارہ تھانہ حلقہ میں بھیم کا اونچا گاوں میں ایک نابالغ لڑکی نے کھلے میں ایک بچی کو جنم دیا ۔

Jul 26, 2019 09:39 PM IST | Updated on: Jul 26, 2019 09:39 PM IST
آبروریزی متاثرہ نابالغ لڑکی نے بچی کو دیا جنم تو پولیس آئی حرکت میں ، کھلا راز تو سب رہ گئے حیران

راجستھان کے دوسا ضلع کے لال سوٹ سب سیکشن کے رام گڑھ پچوارہ تھانہ حلقہ میں بھیم کا اونچا گاوں میں ایک نابالغ لڑکی نے کھلے میں ایک بچی کو جنم دیا ۔ نابالغ کی زچگی کی اطلاع ملنے کے بعد انتظامیہ حرکت میں آئی ۔ نابالغ کے ماں بننے کے بعد پولیس سرگرم ہوئی اور اس لڑکی کے بیان کی بنیاد پر پولیس نے ایک نوجوان کے خلاف آبروریزی کا معاملہ درج کیا ۔ پولیس اب اس نوجوان کی تلاش میں مصروف ہوگئی ہے ۔

نابالغ کی زچگی کی اطلاع ملنے کے بعد جائے واقعہ پر پہنچے پولیس اہلکاروں نے زچہ اور بچہ دونوں کو لال سوٹ کے ماتر ششو کلیان کیندر پہنچایا ۔ وہاں سے ڈاکٹروں نے دونوں کو دوسا ضلع اسپتال بھیج دیا ۔ اے ایس آئی رام سنگھ کے مطابق جمعرات کی دوپہر ضلع کنٹرول روم سے بھیم کا اونچا گاوں میں نابالغ لڑکی کی زچگی کی اطلاع ملنے پر پولیس ٹیم جائے واقعہ پر پہنچی ، جہاں ایک مکان کے پیچھے واقع باڑے میں نابالغ لڑکی نے بچی کو جنم دیا تھا ۔

Loading...

نابالغ لڑکی نے بچی کو جنم دینے کے بعد اس کو اپنایا بھی نہیں ، یہاں تک کہ اس کو اپنا دودھ بھی نہیں پلایا ۔ بعد میں نوزائیدہ بچہ کو وہاں کام کررہے یشودا متھلیش مہتا کے سپرد کردیا گیا ۔ نوزائیدہ بچہ کو دیگر خواتین کا دودھ پلایا گیا پھر بھی اس نے بھوک سے رونا بند نہیں کیا تو اس کو بازار کو بھی دودھ پلایا گیا ۔ لال سوٹ سی او نمراج مینا کے مطابق نوزائیدہ کو نہیں اپنائے جانے پر اس کو چائلڈ ویلفیئر کمیٹی کے سپرد کردیا جائے گا ۔

Loading...