دوستوں کو شراب پلانے سے کیا انکار تو کاٹ دیا نوجوان کا پرائیویٹ پارٹ ، اسپتال میں داخل ، کیس درج

اترپردیش کے پیلی بھیت میں دوستوں سے لڑائی کے دوران ایک نوجوان کا پرائیوٹ پارٹ کاٹے جانے کا معاملہ سامنے آیا ہے ۔ الزام ہے کہ دوستوں نے شراب پلانے کا مطالبہ کیا، مگر جب نوجوان نے انکار کردیا تو دوستوں نے مل کر اس کا عضو تناسل بلیڈ سے کاٹ دیا۔

Jul 12, 2019 10:49 PM IST | Updated on: Jul 12, 2019 10:49 PM IST
دوستوں کو شراب پلانے سے کیا انکار تو کاٹ دیا نوجوان کا پرائیویٹ پارٹ ، اسپتال میں داخل ، کیس درج

دوستوں کو شراب پلانے سے کیا انکار تو کاٹ دیا نوجوان کا پرائیویٹ پارٹ

اترپردیش کے پیلی بھیت میں دوستوں سے لڑائی کے دوران ایک نوجوان کا پرائیوٹ پارٹ کاٹے جانے کا معاملہ سامنے آیا ہے ۔ الزام ہے کہ دوستوں نے شراب پلانے کا مطالبہ کیا، مگر جب نوجوان نے انکار کردیا تو دوستوں نے مل کر اس کا عضو تناسل بلیڈ سے کاٹ دیا ۔ اہل خانہ نے زخمی نوجوان کو اسپتال میں بھرتی کرایا ، جہاں اس کا علاج چل رہا ہے ۔ وہیں پولیس نے معاملہ درج کرکے کارروائی شروع کردی ہے ۔

پولیس کے مطابق پیلی بھیت میں مٹی کے برتنوں کو فروغ دینے کیلئے جمعرات کی دوپہر میں شہر کے بینہر کالج میں کمہار سمان پروگرام کا انعقاد کیا گیا تھا ۔ یہاں مٹی کے برتنوں کی شاندار نمائش کرنے پر گوہنیا کے رہنے والے دیو دت پرجا پتی کو 2100 روپے کا نقد انعام دیا گیا ۔

Loading...

دیودت کے بھائی امت نے الزام لگایا ہے کہ گاوں کے ہی چیترام اور سندر لال نے میرے بھائی سے پہلے انعام کی آدھی رقم مانگی ، اس وقت کہا سنی کے بعد معاملہ رفع دفع ہوگیا ۔ پھر سندر لال نے شراب کا مطالبہ کیا ، جس پر دیودت نے انکار کردیا ، تو آپس میں ہاتھا پائی شروع ہوگئی ۔ اس کے بعد چیترام اور اس کے بھائی آگئے ، دو لوگوں نے دیودت کی گردن پکڑی اور پھر دیگر لوگوں نے مل کر پرائیویٹ پارٹ پر بلیڈ مار دیا ، جس کی وجہ سے کافی خون بہنے لگا ۔

واردات کے بعد اہل خانہ فورا اس کو لے کر اسپتال پہنچے ، جہاں ابتدائی علاج کے بعد اس کو بھرتی کرلیا گیا ۔ اس معاملہ میں سی او سٹی دھرم سنگھ نے بتایا کہ آپسی تنازع کے دوران نوجوان کا پرائیویٹ پارٹ کاٹنے کا معاملہ سامنے آیا ہے ۔ اہل خانہ سے ملی تحریر کی بنیاد پر معاملہ درج کرکے جانچ شروع کردی گئی ہے ۔

Loading...