چچا کے ساتھ قابل اعتراض حالت میں پکڑی گئی ماں ، قتل کرکے بیڈ میں چھپادی بیٹے کی لاش

میرٹھ میں دہل دہلانے دینے والا واقعہ سامنے آیا ہے ۔ ایک ماں نے اپنے سوتیلے بیٹے ( پانچ سال ) کا قتل کرکے لاش کو اپنے ہی ڈبل بیڈ میں چھپا دیا ۔

Sep 15, 2019 07:42 PM IST | Updated on: Sep 15, 2019 07:42 PM IST
چچا کے ساتھ قابل اعتراض حالت میں پکڑی گئی ماں ، قتل کرکے بیڈ میں چھپادی بیٹے کی لاش

چچا کے ساتھ قابل اعتراض حالت میں پکڑی گئی ماں ، قتل کرکے بیڈ میں چھپادی بیٹے کی لاش

میرٹھ میں دہل دہلانے دینے والا واقعہ سامنے آیا ہے ۔ ایک ماں نے اپنے سوتیلے بیٹے ( پانچ سال ) کا قتل کرکے لاش کو اپنے ہی ڈبل بیڈ میں چھپا دیا ۔ ایس پی ( دیہات ) اویناش کمار پانڈے کے مطابق بچے نے اپنے چچا کے ساتھ خاتون کو قابل اعتراض حالت میں دیکھ لیا تھا ، اس لئے سوتیلی ماں نے بیٹے کو موت کے گھاٹ اتار دیا ۔ پولیس نے ملزم خاتون کو گرفتار کرلیا ہے جبکہ ملزم چچا فرار ہے ۔

یہ واقعہ میرٹھ کے تھانہ سردھنا حلقہ کے کپساڑ گاوں میں پیش آیا ہے ، جہاں پانچ سال کا ایوشما اپنے والد اور سوتیلی ماں کے ساتھ رہتا تھا ۔ الزام ہے کہ سوتیلی ماں کا رویہ آیوشمان کے ساتھ اچھا نہیں تھا ، جس کو لے کر پہلے بھی کنبہ میں کئی مرتبہ تنازع ہوچکا تھا ۔ اسی درمیان جمعرات کو اچانک پانچ سال کا آیوشمان غائب ہوگیا ۔ آیوشمان کو ڈھونڈا گیا تو تلاش کرتے کرتے لوگ اس کمرے تک پہنچ گئے ، جہاں معصوم کی لاش چھپائی گئی تھی ۔

Loading...

ماں کے بیڈ پر بیٹھے رہنے کے انداز سے لوگوں کو شک ہوا ۔ بیڈ کھولتے ہی لوگوں کے ہوش اڑ گئے کیونکہ اس میں ہی پانچ سال کے بچے کی لاش چھپا کر رکھی گئی تھی ۔ بچے کی لاش ملتے ہی پورے گھر میں افرا تفری مچ گئی ۔ اطلاع ملنے پر جائے واقعہ پر پہنچی پولیس نے لاش کو قبضے میں لے کر پوسٹ مارٹم کیلئے بھیج دیا ۔ وہیں پولیس نے ملزم خاتون کو گرفتار کرلیا ہے ۔ ملزم خاتون نے بتایا کہ سوتیلے بیٹے نے ایک دن چچا کے ساتھ انہیں قابل اعتراض حالت میں دیکھ لیا تھا ۔ راز کھلنے کے ڈر سے موت کے گھاٹ اتار دیا ۔

Loading...