تری پورہ اسمبلی کی 59 سیٹوں پر پولنگ جاری ، دوپہر ایک بجے تک 46 فیصد ووٹنگ

تری پورہ اسمبلی کی 60 میں سے 59 سیٹوں پر آج صبح ووٹنگ شروع ہو گئی۔ مارکسی کمیونسٹ پارٹی (سی پی ایم)، کانگریس، بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) سمیت مختلف سیاسی پارٹیوں کے کل 292 امیدوار اس بار انتخابی میدان میں ہیں۔

Feb 18, 2018 10:16 AM IST | Updated on: Feb 18, 2018 03:02 PM IST
تری پورہ اسمبلی کی 59 سیٹوں پر پولنگ جاری ، دوپہر ایک بجے تک 46 فیصد ووٹنگ

اگرتلہ : تری پورہ اسمبلی کی 60 میں سے 59 سیٹوں پر آج صبح ووٹنگ شروع ہو گئی ۔ وزیر اعلی نے اگرتلہ میں اپنا ووٹ ڈالے۔  دوپہر ایک بجے تک 46 فیصد پولنگ ہوئی  ۔ مارکسی کمیونسٹ پارٹی (سی پی ایم)، کانگریس، بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) سمیت مختلف سیاسی پارٹیوں کے کل 292 امیدوار اس بار انتخابی میدان میں ہیں۔ سی پی ایم نے اس بار اپنے 57 امیدواروں کو انتخابی میدان میں اتارا ہے. وزیر اعلی مانك سرکار پانچویں مرتبہ اقتدار میں آنے کی منشا کے ساتھ الیکشن لڑ رہے ہیں۔ ریاست میں آزاد اور منصفانہ انتخابات کرائے جانے کے لئے سیکورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے ہیں۔

سی پی ایم امیدوار رامیندر نارائن دیوورما کے انتقال کی وجہ سے چاري لام اسمبلی سیٹ پر اب 12 مارچ کو پولنگ ہوگی۔چیف الیکشن افسر رام ترنی كانتی نے کہا ہے کہ الیکشن حکام اور ریاستی پولیس فورس کے جوانوں سمیت سکیورٹی فورسز نے انتخابات کو غیر جانبدار اور پرامن طریقے سے کرائے جانے کے تمام اقدامات کئے ہیں۔انہوں نے کہا’’ہم یہ یقینی بنائیں گے کہ انتخابات آزاد اور منصفانہ طریقے سے ہو۔ پولیس، سی آر پی ایف اور سبھی اچھے لوگوں خاص طور پر شہری، سیاسی پارٹیوں اور پریس کے تعاون سے ہی یہ ممکن ہے‘‘۔انہوں نے کہا کہ انتخابات کے دوران یا انتخابات کے بعد کسی طرح کے تشدد کا خدشہ نہیں ہے۔

ووٹوں کی گنتی تین مارچ کو ہوگی۔ ریاست میں 25 سال سے سی پی ایم کی حکومت ہے۔ اس بار کے انتخابات میں بی جے پی حکمراں پارٹی کو سخت ٹکر دے رہی ہے۔الیکشن کمیشن نے اسمبلی انتخابات کے پیش نظر 3174 پولنگ مراکز پر 16 ہزار انتخابی عملہ کو سیکورٹی فورسز کے 20 ہزار جوانوں کے ساتھ تعینات کیا ہے۔اسمبلی انتخابات میں ریاست کے 25.37 لاکھ ووٹرز مختلف پارٹیوں کے 292 امیدواروں کی قسمت کا فیصلہ کریں گے۔

ان میں 13 لاکھ مرد اور 12 لاکھ خواتین ووٹر شامل ہیں۔ الیکشن کمیشن کے مطابق 47803 ووٹر ایسے ہیں جو پہلی بار ووٹ کا حق استعمال کریں گے۔ ریاست میں کل 3214 پولنگ بوتھ بنائے گئے ہیں۔ووٹنگ کے لئے چار ہزار سرکاری گاڑیوں کے علاوہ 22 ہزار دیگر گاڑیوں کو ڈیوٹی پر لگایاگیا ہے۔ نیشنل ہائی وے، اضلاع اور دیہات کی سڑکوں پر سیکورٹی کو یقینی بنانے کے لئے سیکورٹی فورس کے جوان مارچ کریں گے۔

Loading...

Loading...