منی پور : ایبوبی سنگھ نے دیا استعفی ، بیرین سنگھ بی جے پی قانون ساز پارٹی کے لیڈر منتخب

منی پور کے سابق وزیر اور اسمبلی الیکشن سے عین قبل کانگریس چھوڑ کر بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) میں شامل ہونے والے این برین سنگھ کو بی جے پی قانون ساز پارٹی کا لیڈر منتخب کیا گیا ہے۔

Mar 14, 2017 09:09 AM IST | Updated on: Mar 14, 2017 09:09 AM IST
منی پور : ایبوبی سنگھ نے دیا استعفی ، بیرین سنگھ  بی جے پی قانون ساز پارٹی کے لیڈر منتخب

امپھال : منی پور کے سابق وزیر اور اسمبلی الیکشن سے عین قبل کانگریس چھوڑ کر بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) میں شامل ہونے والے این برین سنگھ کو بی جے پی قانون ساز پارٹی کا لیڈر منتخب کیا گیا ہے۔  مرکزی وزیر توانائی پیوش گوئل نے  بی جے پی قانون ساز پارٹی کی میراتھن میٹنگ کے بعد نامہ نگاروں کو بتایا کہ مسٹر بسوجت چتیرج نے مسٹر بیرین سنگھ کے نام کی تجویز کی تھی اور دیگر ممبران اسمبلی نے اس کی حمایت کی۔  میٹنگ میں بی جے پی کے نو منتخب تمام 21 ممبران اسمبلی نے حصہ لیا۔

مسٹر گوئل نے بتایا کہ پارٹی ریاست میں حکومت بنانے کا دعوی پیش کرے گی۔ ہفتہ کو اعلان شدہ نتائج کے مطابق 60 رکنی اسمبلی میں بی جے پی کو 21 اور کانگریس کو 28 سیٹیں ملی ہیں۔ ناگا پیپلز فرنٹ اور نیشنل پیپلز پارٹی کے چار امیدوار کامیاب ہوئے ہیں۔ ترنمول کانگریس اور لوک جن شکتی پارٹی کے ایک ایک امیدوار اور ایک ایک آزاد امیدوار کو جیت حاصل ہوئی ہے۔

قومی سطح کےفٹبال کھلاڑی مسٹر سنگھ بعد میں صحافت اور پھر سیاست میں آئے۔ وہ پہلی بار 2002 میں ڈیموکریٹک ریوليوشنري پیپلز پارٹی کے ٹکٹ پر رکن اسمبلی منتخب ہوئے تھے۔  بعد میں وہ کانگریس میں شامل ہو گئے اور مئی 2003 اور 2007 میں ریاست میں وزیر بھی رہے۔ سال 2012 میں ہونے والے اسمبلی انتخابات میں بھی وہ فاتح رہے تھے، لیکن اوكرام ایبوبي حکومت میں انہیں کوئی وزارت نہیں دی گئی تھی۔ اس بار الیکشن سے عین قبل وہ کانگریس چھوڑ کر بی جے پی میں شامل ہو گئے تھے۔

Loading...

اس سے قبل ایبوبي سنگھ نے پیر کو وزیر اعلی کے عہدے سے استعفی دے دیا ۔ گورنر نجمہ ہیبت اللہ نے کہا تھا کہ سنگھ کے استعفی دینے تک وہ نئی حکومت کی تشکیل کا عمل شروع نہیں کر سکتی ۔ نائب وزیر اعلی  نے بتایا کہ سنگھ نے گورنر کو استعفی سونپ دیا ہے ۔

Loading...