میگھالیہ: 32 دن کے بعد ملی کوئلہ کان میں پھنسے 15 میں سے ایک مزدور کی لاش

ہندوستانی بحریہ اور این ڈی آر ایف کی مشترکہ ٹیم نے منگل کو کان کے گہرے پانی میں ریسکیو کے دوران ایک کان کن کی لاش دیکھی

Jan 17, 2019 11:13 AM IST | Updated on: Jan 17, 2019 11:13 AM IST
میگھالیہ: 32 دن کے بعد ملی کوئلہ کان میں پھنسے 15 میں سے ایک مزدور کی لاش

سب سے اہم بات یہ ہے کہ کان کے اندر ابھی بھی پانی کی سطح 350 فٹ تک بنی ہوئی ہے۔

میگھالیہ کے ایسٹ جینتیا ہلس ضلع میں ایک غیر قانونی کان میں گزشتہ 32 دنوں سے 15 مزدور پھنسے ہوئے ہیں۔ ذرائع کے مطابق، بچاو کام کے دوران ان میں سے 1 مزدور کی لاش دیکھی گئی ہے۔ اب لاش کو باہر نکالنے کی کوشش تیز ہو گئی ہے۔

ہندوستانی بحریہ اور این ڈی آر ایف کی مشترکہ ٹیم نے منگل کو کان کے گہرے پانی میں ریسکیو کے دوران ایک کان کن کی لاش دیکھی۔ ریسکیو ٹیم کان میں پانی کے اندر کان کنوں کی تلاش کر رہی ہے۔

Loading...

سب سے اہم بات یہ ہے کہ کان کے اندر ابھی بھی پانی کی سطح 350 فٹ تک بنی ہوئی ہے۔ جبکہ ہائی پاور پمپ کی مدد سے اب تک کروڑوں لیٹر پانی نکالا جا چکا ہے۔ اس کے باوجود پانی کی سطح کم ہونے کا نام نہیں لے رہی ہے۔

کان میں اڈیشہ فائر ریسکیو ٹیم نے 63 ہارس پاور کے 10 پمپ لگائے ہیں۔

Loading...