فیس بک پر اٹل بہاری واجپئی کو 'سنگھی' اور 'فاشسٹ' بتانے والے پروفیسر پر حملہ

پروفیسر کے تبصرہ سے ناراض ہو کر کچھ لوگوں نے ان کے اوپر حملہ بول دیا۔

Aug 18, 2018 10:50 AM IST | Updated on: Aug 18, 2018 10:50 AM IST
فیس بک پر اٹل بہاری واجپئی کو 'سنگھی' اور 'فاشسٹ' بتانے والے پروفیسر پر حملہ

پروفیسر سنجے کمار: فوٹو نیوز 18

بہار کے موتیہاری میں مہاتما گاندھی سینٹرل یونیورسٹی کے ایک پروفیسر کو سابق وزیر اعظم اٹل بہاری واجپئی پر تبصرہ کرنا بھاری پڑ گیا۔ پروفیسر کے تبصرہ سے ناراض ہو کر کچھ لوگوں نے ان کے اوپر حملہ بول دیا۔ حملہ میں پروفیسر زخمی ہو گئے۔ انہیں قریب کے اسپتال میں مرہم پٹی کے لئے لے جایا گیا۔

اطلاعات کے مطابق، یہ واقعہ جمعرات کی شام کا ہے۔ مہاتما گاندھی سینٹرل یونیورسٹی، موتیہاری میں سماجیات کے پروفیسر سنجے کمار اپنی رہائش گاہ پر کچھ کام کر رہے تھے۔ تبھی چار پانچ لوگوں نے ان پر حملہ کر دیا۔ حملہ آوروں نے الزام لگایا کہ مقبول سابق وزیر اعظم اٹل بہاری واجپئی کے خلاف پروفیسر نے نامناسب الفاظ کا استعمال کر سوشل میڈیا پر لکھا ہے جس سے انہیں تکلیف پہنچی ہے۔

Loading...

وہیں، پروفیسر سنجے کمار نے اپنے اوپر حملہ کا الزام وی سی اروند اگروال پر لگایا ہے۔ سنجے نے موتیہاری تھانہ میں ایک شکایتی مکتوب دے کر کارروائی کی مانگ کی ہے۔ پروفسیر نے کہا کہ فیس بک پر انہوں نے کوئی بھی نامناسب لفظ استعمال نہیں کیا ہے۔ حملہ آور یونیورسیٹی کے وی سی کے لوگ ہیں۔

Loading...