نوزائیدہ بچوں کی اسمگلنگ : بھارتیہ جنتا پارٹی سے وابستہ ڈاکٹر دلیپ گھوش گرفتار

بی جے پی لیڈر ڈاکٹر دلیپ گھوش جوسی آئی ڈی نے سرکاری اسپتال آر جی کار میڈیکل کالج و اسپتال سے وابستہ رہ چکے ہیں کو سی آئی ڈی ہیڈکوارٹر میں کئی گھنٹے تک پوچھ تاچھ کرنے کے بعد گرفتار کیا گیا ۔

Dec 01, 2016 08:46 AM IST | Updated on: Dec 01, 2016 08:46 AM IST
نوزائیدہ بچوں کی اسمگلنگ : بھارتیہ جنتا پارٹی سے وابستہ ڈاکٹر دلیپ گھوش گرفتار

علامتی تصویر

کلکتہ۔ مغربی بنگال میں نوزائیدہ بچوں کی اسمگلنگ کے ریکٹ کا دائرہ کار بڑھتا ہی جارہاہے ۔سی آئی ڈی نے اس معاملے میں مزید دو ڈاکٹروں کو گرفتار کیا ہے ۔ان میں سے ایک ڈاکٹر کا تعلق بی جے پی سے ہے ۔ بی جے پی لیڈر ڈاکٹر دلیپ گھوش جوسی آئی ڈی نے سرکاری اسپتال آر جی کار میڈیکل کالج و اسپتال سے وابستہ رہ چکے ہیں کو سی آئی ڈی ہیڈکوارٹر میں کئی گھنٹے تک پوچھ تاچھ کرنے کے بعد گرفتار کیا گیا ۔ڈاکٹر نتیانند بسواس کو بھی سی آئی ڈی نے گرفتار کیا ہے ۔گھوش سری کرشنا نرسنگ ہوم کالج اسٹریٹ سے وابستہ ہیں۔ سی آئی ڈی نے بتایا کہ دلیپ گھوش نے بدرویا نرسنگ ہوم اور جنوبی 24پرگنہ کے اولڈ ایج ہوم سے کم سے کم 100بچوں کی اسمگلنگ کی ہے ۔اب تک بچوں کی اسمگلنگ معاملے میں پانچ ڈاکٹروں کی گرفتاری ہوچکی ہے۔

پولیس نے بتایا کہ ڈاکٹروں نے بچوں کے والدین کو گمراہ کرنے کے بعد ان بچوں کے ٹریفکنگ کی راہ ہموار کرنے میں کلیدی کردار ادا کیا ہے ۔یہ ڈاکٹر گھروالوں سے کہتے تھے آپریشن کے دوران بچے کی موت ہوگئی ہے ۔اور یہ لوگ اسپتال میں موجود مردہ بچوں کو دکھا دیتے تھے ۔ اس کے بعد ان بچوں کو دوسری جگہ منتقل کردیا جاتا تھا جہاں ان بچوں کو 2لاکھ روپیہ سے تین لاکھ روپیہ کے درمیان فروخت کیا جاتا تھا۔ سی آئی ڈی کے ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل سی آئی ڈی راجیش کمار نے کہا کہ لڑکے کو زیادہ قیمتوں میں فروخت کیا جاتا تھا ۔ڈاکٹر دلیپ گھوش کی گرفتاری کے بعد بی جے پی نے پارٹی سے برطرف کردیا ہے ۔

انہوں نے سالٹ لیک کارپوریشن میں انتخاب بھی لڑا تھا مگر ہار گئے تھے۔پولس نے بتایا کہ اس معاملے میں مزید ڈاکٹر ملوث ہو سکتے ہیں ۔ بچوں کی اسمگلنگ کے بعد مغربی بنگال حکومت کی تنقید شروع ہوگئی ہے ۔جب کہ ریاستی وزیر ششی پانجا نے کہا کہ ہم نے ان نرسنگ ہوم پر چھاپہ مارا تھا مگر کچھ بھی برآمد نہیں ہوا ۔

Loading...

Loading...