کیا یہ بہاراین ڈی اے میں طوفان سے قبل کی خاموشی تو نہیں...؟

جے ڈی یو کے ریاستی صدروششٹھ نارائن سنگھ کا کہنا ہے کہ بہار این ڈی اے میں سب کچھ ٹھیک ہے۔

Sep 07, 2018 02:28 PM IST | Updated on: Sep 07, 2018 02:28 PM IST
کیا یہ بہاراین ڈی اے میں طوفان سے قبل کی خاموشی تو نہیں...؟

بی جے پی کے قومی صدر امت شاہ اور بہار کے وزیراعلیٰ نتیش کمار: فائل فوٹو

اوپیندر کشواہا کے کھیر والے بیان کے بعد جتنی تیزی سے سیاسی ہلچل تیز ہوئی تھی، اتنی ہی تیزی سے سست پڑتی نظرآرہی ہے۔ این ڈی اے میں شامل ایک سیاسی پارٹی کے دفترمیں بحث تھی... "کہیں یہ طوفان سے پہلے کی خاموشی تو نہیں ہے"؟

وہیں دوسری جانب جب نیوز 18 کے نامہ نگارنے جنتا دل (یونائیٹیڈ) کے ریاستی صدر وششٹھ  نارائن سنگھ کو سیٹ شیئرنگ پر جمعرات کو  بات کی تو انہوں نے کہا کہ "این ڈی اے میں سب ٹھیک ہے، کوئی پریشانی نہیں ہے۔ سیٹوں کی تقسیم ماہ کے آخر تک ہوجائے گی"۔

Loading...

جب ان سے پوچھا گیا کہ ماہ کے آخر کا مطلب کب تک ؟ تو جواب ملا نہیں اس سے پہلے ہی۔ وششٹھ نارائن نے ہی 28 اگست کو بیان دیا تھا کہ جے ڈی یو اور بی جے پی کے درمیان سیٹوں کے تال میل پر اتفاق رائے ہوگیا ہے، لیکن تعداد کا اعلان دونوں پارٹیوں کے بڑے لیڈران کریں گے۔

اسی بیان کے بعد خبرآئی کہ بی جے پی نے 20-20 کے پرانے فارمولے پر ہی لوک جن شکتی پارٹی (ایل جے پی)۔ اور جے ڈی یو اور کشواہا کی راشٹریہ لوک سمتا پارٹی (آرایل ایس پی) کو سیٹیں دینے کی تجویز پیش کی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: مرکزی وزیراوپیندر کشواہا نے کہا "مودی کو وزیراعظم نہیں دیکھنا چاہتے ہیں این ڈی اے کے کچھ لوگ"۔

نیوز 18 نے 9 اپریل کو ہی بتادیا تھا کہ این ڈی اے میں غیر بی جے پی جماعتیں ہی 20-20 فارمولے پر سیٹوں کی تقسیم چاہتی ہیں، اس کے تحت 20 سیٹیں بی جے پی رکھے اور باقی 20 اتحادی جماعتوں کے لئے چھوڑنے کی تجویز تھی۔ حالانکہ کئی ضمنی انتخابات اور کرناٹک اسمبلی انتخابات میں بی جے پی کی شکست کے بعد اتحادی جماعتوں کے سودے بازی کی طاقت میں اضافہ ہوا ہے اور اس فارمولے پر جے ڈی یو خود بھی ناراض بتائی گئی۔ اسے 12 سیٹیں دینے کی تجویز ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  تیجسوی یادو نے اشاروں اشاروں میں اوپیندر کشواہا کو دی آر جے ڈی میں شامل ہونے کی دعوت

اب ایسا لگ رہا ہے کہ پردے کے پیچھے معاملے کو حل کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ 16 ستمبر کو جے ڈی یو کی ایگزیکٹیو کی میٹنگ ہے، جس میں خود نتیش کمار حصہ لیں گے۔ پارٹی ذرائع کے مطابق اس سے قبل ہی سیٹ تقسیم پر فیصلہ ہوسکتا ہے۔

 

آنند امرت راج کی رپورٹ

 

Loading...