ہوم » نیوز » تعلیم و روزگار

7th Pay Commission: سرکاری ملازمین کی بڑھے گی بیسک تنخواہ؟ جانئے مودی سرکار نے کیا دیا جواب

مودی حکومت نے یکم جولائی سے سرکاری ملازمین کے لئے مہنگائی الاؤنس میں 28 فیصد اضافہ کردیا ہے۔

  • Share this:
7th Pay Commission: سرکاری ملازمین کی بڑھے گی بیسک تنخواہ؟ جانئے مودی سرکار نے کیا دیا جواب
علامتی تصویر

7th Pay Commission latest news today: مہنگائی بھتے (Dearness allowance -DA) میں اضافے کے بعد مرکزی حکومت نے بیسک تنخواہ بڑھانے سے انکار کر دیا ہے۔ دراصل ، راجیہ سبھا میں ایک سوال کے تحریری جواب میں مرکزی وزارت خزانہ میں ریاستی وزیر پنکج چودھری نے کہا کہ مرکزی حکومت ایسی کسی اسکیم کے بارے میں ایکٹولی طور پر نہیں سوچ رہی ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ 2.57 کا فٹمینٹ فیکٹر سبھی ملازمین کیلئے یکساں طور پر صرف 7 ویں مرکزی پے کمیشن کی سفارشوں کی بنیاد پر نظر ثانی شدہ تنخواہ کے ڈھانچے کے مقصد کے لیے نافذ کیا گیا ہے ۔


مودی حکومت نے یکم جولائی سے سرکاری ملازمین کے لئے مہنگائی الاؤنس میں 28 فیصد اضافہ کردیا ہے۔ مرکزی کابینہ نے یکم جولائی سے مرکزی حکومت کے ملازمین اور پنشنرز کے لیے مہنگائی الاؤنس (ڈی اے) اور مہنگائی ریلیف (ڈی آر) میں 11 فیصد اضافے کی منظوری دی تھی جس سے 48 لاکھ مرکزی حکومت کے ملازمین اور 65 لاکھ پنشنرز کو فائدہ ہوا۔ اب ڈی اے کی نئی شرح 17 فیصد سے بڑھ کر 28 فیصد ہو گئی ہے۔


آفس میمورنڈم کی وزارت خزانہ کے تحت محکمہ اخراجات نے کہا کہ مرکزی حکومت کے ملازمین کو ڈی اے موجودہ تنخواہ کے 17 فیصد سے بڑھا کر 28 فیصد کیا جائے گا۔ اس اضافے میں 1 جنوری 2020 ، 1 جولائی 2020 اور 1 جنوری 2021 کو اضافے کی اضافی قسطیں بھی شامل ہیں۔


گزشتہ سال اپریل میں وزارت خزانہ نے کووڈ 19 وبائی بیماری کی وجہ سے 30 جون 2021 تک مہنگائی الاؤنس (ڈی اے) میں اضافہ روک دیا تھا۔ 1 جنوری 2020 سے 30 جون 2021 تک ڈی اے کی شرح 17 فیصد تھی۔
Published by: Sana Naeem
First published: Aug 03, 2021 06:49 PM IST