ہوم » نیوز » تعلیم و روزگار

بڑی خبر: یو جی سی کا فیصلہ برقرار، سپریم کورٹ نے کہا ۔30  ستمبر تک کرائیں Final Year کے امتحان

سپریم کورٹ (Supreme Court) نے یو جی سی (UGC) کے فیصلے کو برقرار رکھتے ہوئے کہا ہے کہ سال آخر کے امتحانات (Final Year Exams) تیس ستمبر تک کروائے جائیں۔

  • Share this:

نئی دہلی. سپریم کورٹ (Supreme Court) نے یو جی سی (UGC) کے فیصلے کو برقرار رکھتے ہوئے کہا ہے کہ سال آخر کے امتحانات  (Final Year Exams) تیس ستمبر تک کروائے جائیں۔ عدالت نے کہا۔ 'ریاستیں طلباء کو آخری سال کے امتحانات کے بغیر پاس نہیں کرسکتی ہیں۔' آدتیہ ٹھاکرے کی یوا سینا سمیت متعدد درخواستوں میں کورونا وائرس کے بحران کے درمیان امتحانات کو رد کرنے کا مطالبہ کیا گیا تھا۔ درخواستوں میں طلبا کو درپیش مشکلات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا گیا تھا کہ کووڈ 19 کے بحران کی وجہ سے تمام تعلیمی ادارے بند ہیں۔ مطالبہ کیا گیا تھا کہ امتحان رد کیا جانا چاہئے۔


کورٹ نے کہا کہ ریاستوں کو چاہئے کہ وہ طلبہ کو پاس کرنے کے لئے  امتحان کا انعقاد کریں۔  کہا گیا کہ ڈیزاسٹر مینجمنٹ ایکٹ (Disaster management act) کے تحت ریاستوں میں وبائی امراض کے پیش نظر امتحانات ملتوی کئے جاسکتے ہیں اور تاریخ طے کرنے کے لئے یو جی سی سے صلاح لی جاسکتی ہے۔ عدالت نے کہا کہ وہ ریاستیں جو 30 ستمبر تک سال آخر کا امتحان (Final Year Exams) کرانےکے لئے راضی نہیں ہیں  انہیں یو جی سی کو جانکاری دینی ہوگی۔ جسٹس اشوک بھوشن کی سربراہی میں بنچ نے اپنا فیصلہ سنایا  جس نے 18 اگست کو اس موضوع پر اپنا فیصلہ محفوظ کرلیا تھا۔


اہم بات یہ ہے کہ آخری سال کے امتحانات کے خلاف درخواستوں میں یہ استدلال کیا گیا تھا کہ طلبا نے پانچ سمسٹر مکمل کیے ہیں اور آخری سال کے نتائج ان کے  کمیولیٹو گریڈ سی جی پی اے CGPA  کی بنیاد پر اعلان کیے جاسکتے ہیں۔


 
Published by: sana Naeem
First published: Aug 28, 2020 12:17 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading