ہوم » نیوز » تعلیم و روزگار

بہار مدرسہ ایجوکیشن بورڈ کے اچھے دن : اردو کتابیں اور موبائل ایپ ملنے سے طلبا میں خوشی کی لہر

بہار میں آئندہ ہونے والے اسمبلی انتخاب کے مدّنظر حکومت کی مدرسوں پر ہے خاص نظر، مدرسہ بورڈ کے مطالبات جلدہی پورا کیاجارہا ہے

  • Share this:
بہار مدرسہ  ایجوکیشن  بورڈ  کے اچھے دن : اردو کتابیں اور موبائل ایپ  ملنے سے طلبا میں خوشی کی لہر
بہارمدرسہ ایجوکیشن بورڈ

بہار مدرسہ ایجوکیشن بورڈ کے نئے دفتر کا پتا اب پھلواری شریف ہارون نگر سیکٹر دو ہوگیا ہے۔ حالانکہ مدرسہ بورڈ کا یہ مستقل پتا نہیں ہے، امید کی جارہی ہیکہ جلد ہی حکومت کی جانب سے پٹنہ کے میٹھا پور میں مدرسہ بورڈ کے لئے شانداردفتر کی تعمیر کی جائےگی۔ مدرسہ بورڈ کے چیئر مین کے مطابق حکومت کی جانب سے مدرسوں کی ترقی کے سلسلے میں کئی طرح کا منصوبہ بنایا گیا ہے جس کو زمین پر اتارنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ واضح رہیکہ مدرسہ بورڈ سے1942 مدرسہ ملحق ہے اس کے علاوہ مزید چار ہزار مدرسوں کا مدرسہ بورڈ امتحان منعقد کرتی ہے۔ ہر سال قریب ایک لاکھ پچاس ہزار سے دو لاکھ طلباء مدرسہ بورڈ سے امتحان دےکر فارغ ہوتے ہیں لیکن ودیاپتی مارگ پر مدرسہ بورڈ کا دفتر چھوٹا تھا اسلئے بورڈ کے دفتر کو پھلواری شریف کے ہارون نگر میں منتقل کیاگیا ہے۔


بہارمدرسہ ایجوکیشن بورڈ کے چیئر مین عبدالقیوم انصاری
بہارمدرسہ ایجوکیشن بورڈ کے چیئر مین عبدالقیوم انصاری


اب نئے دفتر سے مدرسوں کے فلاح اور اس کی ترقی کا لائحہ عمل مرتب کیا جارہا ہے۔مدرسہ بورڈ کے چیئرمین بنتے ہی عبدالقیوم انصاری کو کافی تنقید کا سامنا کرنا پڑا لیکن بورڈ کے چیئر مین عبدالقیوم انصاری لگاتار مدرسوں کے فلاح کے سلسلے میں حکمت عملی بنانے کی کوشش میں جٹے رہے۔ اس کوشش کا نتیجہ ہیکہ مدرسہ بورڈ کا دفتر بدلا، مدرسوں میں نیا نصاب لاگو کیاگیا، تمام مضامین کی کتابیں اردو میں شائع کی گئی ۔ کتابوں کا موبائل اپ بنایاگیا۔ اس کے ساتھ ہی سیمانچل کے مدرسوں کے لئے پورنیہ میں مدرسہ بورڈ کا علاقائی دفتر قائم کیاگیا۔ وہیں مدرسوں کے اساتزہ کو ڈیزاسٹر مینجمینٹ کی تربیت کے ساتھ ہی جدید علوم پڑھانے کا انتظام کیاگیا۔ مدرسہ بورڈ تمام مدارس میں کمپیوٹر اور پرینٹر مہیاء کرانے جارہا ہے جس پر پانچ کروڑ 62 لاکھ روپئےخرچ کرنے کا منصوبہ بنایا گیا ہے۔ بورڈ کے چیئرمین نے دعویٰ کیا ہیکہ مدارس کے ترقی کے تعلق سے حکومت سنجیدہ ہے اور مدرسوں میں بنیادی سہولت فراہم کرانے کے لئے مدرسہ ترقیاتی اسکیم چلائی جارہی ہے جس میں مدرسوں کے ضرورت کے مطابق ایک بڑی رقم کو خرچ کرنے کا منصوبہ ہے۔


ادھر گزشتہ دو دہائی بعد مدرسوں میں پڑھا رہے سائنس کے اساتذہ کو تنخواہ ادا کی گئی ہے۔ بورڈ کے چیئرمین نے کہا کی صوبہ کے مدارس میں اعلیٰ تعلیمی میعار کو نافذ کرانے کی کاروائی کی جارہی ہے، اس کے لئے وقت وقت پر مدارس کے اساتزہ کو تربیت دینے کا کام بھی جاری ہے۔مدرسوں کو تکنیک سے جوڑنے کی حکمت عملی پر بھی کام شروع ہوگیا ہے۔ بیس سال بعد مدارس کا نصاب بدلا گیا ہے۔ اب بہار کے مدرسوں کے طلباء کو این سی ای آر ٹی کی کتاب پڑاھئ جارہی ہے، ساتھ ہی امتحانات فارم بھرنے کا آن لائن انتظام کیاگیا ہے۔ رزلٹ بھی آن لائن جاری کیا جارہا ہے۔ بورڈ نے یہ بھی اعلان کیا ہیکہ طلباء کا امتحان وقت پر منعقد کرنے اور رزلٹ وقت پر شائع کیاجائےگا۔

ماضی میں وقت پر رزلٹ نہیں آنے کے سبب مدرسوں کے طلباء کو کافی دشواریوں کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ ایسے بھی مواقع آئے ہیں جب مدرسہ بورڈ سے پاس کرنے کے بعد بھی انکا کہیں داخلہ نہیں ہوا اسلئے کی بورڈ نے کافی تاخیر سے رزلٹ جاری کیا۔ اب اس مسلہ پر بھی قابو پانے کا اعلان کیا گیا ہے۔ چیرمین کے مطابق مدرسہ بورڈ کا امتحان ہر حال میں وقت پر ہوگا اور وقت پر رزلٹ جاری کیا جائےگا۔ وہیں مدرسہ بورڈ کے بدعنوانیوں پر بھی موجودہ انتظامیہ نے شکنجا کسا ہے۔ چیئرمین کے مطابق مدرسہ بورڈ میں بدعنوانی کرنے والے کسی بھی شخص کو کسی بھی قیمت پر بخشا نہیں جائےگا۔ چیئرمین کے سخت ہدایت کو دیکھتے ہوئے مدرسہ بورڈ کے بدعنوانیوں پر لگام لگا ہے۔ وہیں طلباء کو جدید تعلیم سے آرستہ کرنے کا کام بھی جاری ہے۔ امید کی جارہی ہیکہ انتخابی سال میں حکومت کی جانب سے مدارس کو مزید کئ طرح کے مرعات حاصل ہونگے۔
First published: Feb 12, 2020 11:59 PM IST