ہوم » نیوز » تعلیم و روزگار

کورونا بحران نے ملک کو تعلیمی طور پر کیا کمزور، ایس آئی او نے تعلیمی میدان میں کام کرنے کا کیا فیصلہ

  • Share this:
کورونا بحران نے ملک کو تعلیمی طور پر کیا کمزور، ایس آئی او  نے تعلیمی میدان میں کام کرنے کا کیا فیصلہ

کورونا بحران نے جہاں دنیا کو معاشی طور پر کمزور کیا ہے وہیں تعلیمی طور پر بھی اس کا کافی اثر پڑا ہے۔ لاک ڈاؤن کے ساتھ تعلیمی ادارے بھی بند ہیں۔ ان لاک کے ساتھ جہاں زندگی پٹری پر آرہی ہے لیکن تعلیمی ادارے بند ہیں۔ تعلیمی ادارے کھولے جانے کے تعلق سے کوئی فیصلہ نہیں لیا گیا ہے۔ اسٹوڈنٹس اسلامک آرگنائزیشن نے طلباء میں تعلیمی بیداری مہم چلانے کا فیصلہ کیا ہے۔ ایس آئی او  (SIO ) نے بنگال حکومت سے تعلیمی ادارے کھولے جانے کا مطالبہ کیا ہے۔


ایس آئی او کے مطابق تعلیمی طور پر بنگال کافی پسماندہ ہے۔ بچوں میں ڈراپ آؤٹ کی شرح میں اضافہ ہورہا ہے۔ ایسے میں تعلیمی ادارے بند ہونے کی وجہ سے ڈراپ آوٹ کی شرح میں مزید اضافے کا امکان ظاہر کرتے ہوئے ایس آئی او لیڈر شاداب معصوم نے اپنی تنظیم کی جانب سے ریاست بھر میں اسکول چلو مہم شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ایس ائی او نے حکومت کو تعلیمی میدان میں سنجیدہ اقدامات کرنے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا ریاست میں اسکولوں کی تعداد میں اضافہ کرنے اور مختلف تعلیمی اسکیم شروع کرنے کی ضرورت پر زور دیا ۔


ملک بھر میں لاک ڈاؤن کے ساتھ تعلیمی نقصان کو پورا کرنے کے لئے آن لائن کلاسز کا سلسلہ شروع کیا گیا ہے۔ تاہم بنگال میں طلباء کی ایک بڑی تعداد آن لائن کلاسز کا فائدہ اٹھانے میں ناکام ہیں۔ ایس ائی او نے اس صورتحال کو افسوسناک بتاتے ہوئے کہا انے والے دنوں میں اس کے نقصانات کا سامنا ملک کو بھگتنا پڑے گا ایس آئی او نے دسویں و بارہویں جماعت کے کے طلباء کو تعلیمی سہولیات فراہم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

Published by: Sana Naeem
First published: Jan 15, 2021 04:33 PM IST