ہوم » نیوز » تعلیم و روزگار

بڑی خبر! وہاٹس ایپ کے ذریعہ اسکول کا تعلیمی سلسلہ شروع کرنے کا فیصلہ

وہاٹس ایپ کے ذریعہ تعلیم دینے کو لیکر محکمہ اسکول تعلیم نے رہنما ہدایت جاری کردی ہے۔

  • Share this:
بڑی خبر! وہاٹس ایپ کے ذریعہ اسکول کا تعلیمی سلسلہ شروع کرنے کا فیصلہ
وہاٹس ایپ

مدھیہ پردیش حکومت نے کورونا کی وبائی بیماری کے بیچ پہلی سے آٹھویں تک کے طلبا کو وہاٹس ایپ  کے ذریعہ تعلیم دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ وہاٹس ایپ کے ذریعہ تعلیم دینے کو لیکر محکمہ اسکول  تعلیم نے رہنما ہدایت جاری کردی ہے۔ رہنما ہدایت کے اسکول اساتذہ کو تعلیمی سال دوہزار اکیس و بائیس کے لئے وہاٹس ایپ گروپ تشکیل دینے کی جہاں ہدایت دی گئی ہے وہیں اساتذہ کو دس جون تک لازمی طور پر ہر مضمون کے لئے علیحدہ علیحدہ گروپ تشکیل دینے  کی ہدایت دی گئی ہے۔

مدھیہ پردیش کے وزیر برائے اسکول تعلیم اندر سنگھ پرمار کہتے ہیں کہ کورونا قہر میں  حکومت  بچوں کی تعلیم کو لیکر فکر مند ہے ۔ اب ریاست میں حکومت اور عوام کی مشترکہ کوششوں سے کورونا ریکوری ریٹ بڑھ کر چورانوے اعشاریہ ایک فیصد ہوگیا ہے اور یکم جون سے ریاست میں ان لاک کو لیکر تیاری  کی جا رہی ہے وہیں کورونا کی وبائی بیماری کے بیچ محکمہ تعلیم نے وہاٹس ایپ کے ذریعہ بچوں کو تعلیم دینے کا فیصلہ کیا ہے۔




اس کے لئے رہنما ہدایت جاری کردی گئی ہے۔ریاست میں ڈیویزن کی سطح پر ہر کلاس کے لئے الگ الگ گروپ بنائے جائیں گے۔ بچوں کو تعلیمی مواد بھی وہاٹس ایپ کے ذریعہ ہی مہیا کیا جائے گا۔اس سلسلے میں اساتذہ کو دس جون تک وہاٹس ایپ گروپ تشکیل دینے کی ہدایت دی گئی ہے۔ جن بچوں کے پاس اسمارٹ فون نہیں ہے انہیں پڑوس کے اسمارٹ فون والے بچوں کے گروپ سے جوڑا جائے گا تاکہ سبھی لوگوں تک تعلیم کی روشنی پہنچ سکے۔



وہیں حکومت کے فیصلہ کو کانگریس نے غیر فطری قرار دیا ہے ۔ کانگریس ترجمان  اجے یاادو کہتے ہیں کہ چھوٹے بچوں کو اسکرین سے جوڑنا ان کی صحت کے لئے نقصاندہ ہے۔ اور پھر حکومت یہ کیوں بھول رہی ہے کہ اس ریاست میں ایسے بچوں کی ایک بڑی تعداد ہے جن کے پاس اسمارٹ فون نہیں ہیں ۔وہ وہاٹس ایپ کے ذریعہ کیسے پڑھ سکیں گے۔

حکومت کہہ رہی ہے کہ پڑوسی کے بچوں کے گروپ سے جوڑکر انہیں تعلیم دی جائے گی ۔تو پڑوسی کا بچہ خود پڑھے گا یا دوسروں کو پڑھنے کا موقعہ دےگا۔ حکومت چاہیئے کہ اپنے ایسے تغلقی فرمان کو واپس لے اور جب تک حالات سازگار نہ ہوں ایسے تعلیمی سلسلہ کو روکے جس سے بچوں کی صحت پر منفی اثرات مرتب ہونے کا خطرہ ہو۔
Published by: Sana Naeem
First published: May 29, 2021 02:27 PM IST