உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Hyderabad: ویزاکے خواہشمندوں کیلئےخوشخبری! US student visa اپائنٹمنٹس بہت جلدشروع

    یو ایس قونصلیٹ جنرل حیدرآباد نے اس کی اطلاع دی ہے۔

    یو ایس قونصلیٹ جنرل حیدرآباد نے اس کی اطلاع دی ہے۔

    یو ایس قونصلیٹ جنرل حیدرآباد نے منگل کو ٹویٹ کیا کہ سٹوڈنٹ ویزا، مشن انڈیا نے پچھلے سال 62,000 طلبا کے ویزوں کی ریکارڈ تعداد جاری کی ہے اور اس سال اس سے بھی زیادہ طلبا کو ویز جاری کیا جاسکتا ہے۔ جون میں شروع ہونے والے انٹرویوز کے لیے مئی کے وسط میں شروع ہونے والی تقرریوں کی تلاش کریں۔

    • Share this:
      امریکی اسٹوڈنٹ ویزا (US student visas) کے خواہشمند امیدوار اپوائنٹمنٹس تلاش کر سکتے ہیں جو جون میں شروع ہونے والے انٹرویوز کے لیے مئی کے وسط میں کھلیں گی۔

      یو ایس قونصلیٹ جنرل حیدرآباد نے منگل کو ٹویٹ کیا کہ سٹوڈنٹ ویزا، مشن انڈیا نے پچھلے سال 62,000 طلبا کے ویزوں کی ریکارڈ تعداد جاری کی ہے اور اس سال اس سے بھی زیادہ طلبا کو ویز جاری کیا جاسکتا ہے۔ جون میں شروع ہونے والے انٹرویوز کے لیے مئی کے وسط میں شروع ہونے والی تقرریوں کی تلاش کریں۔

      مزید پڑھیں: Jobs in Telangana: تلنگانہ میں 80 ہزار نئی نوکریوں کا اعلان، لیکن پہلے سے وعدہ شدہ اردو کی 558 ملازمتیں ہنوز خالی!

      یو ایس قونصلیٹ جنرل حیدرآباد نے منگل کو ٹویٹ کیا کہ اپنی ملاقات کے وقت ہمیں بتائیں کہ آپ کی اسٹڈی آپ کے لیے کس طرح معنی رکھتا ہے؟

      اسپین میگزین کی ایک رپورٹ کے مطابق بین الاقوامی ہائی اسکول طلبہ(International High School Sudents) اکثر امریکہ (United States)میں انڈرگریجویٹ پروگراموں (undergraduate programs) میں داخلے کے لیے درخواست دیتے ہیں۔غالباً اس کی وجہ یہ ہے کہ امریکہ میں داخلوں کی پالیسی (Application process)مجموعی نوعیت کی ہے۔ داخلہ کے عمل سے درخواست دہندگان کو اپنے متعلق اظہار رائے کرنے کا موقع ملتا ہے۔ اس میں نہ صرف تدریسی اجزا مثلاً مارک شیٹ اور مختلف ٹسٹ میں حاصل شدہ نمبرات شامل ہوتےہیں بلکہ اس میں مشہور سرگرمیوں کی فہرست میں اپنی شخصیت اور دلچسپیوں کے بارے میں اظہار کرنے کا موقع بھی ملتا ہے۔

      مزید پڑھیں: TMREIS: تلنگانہ اقلیتی رہائشی اسکول میں داخلوں کی آخری تاریخ 20 اپریل، 9 مئی سے امتحانات

      درخواست میں طلبہ ہائی اسکول سے لے کر اب تک کی ۱۰ غیر نصابی سرگرمیوں میں اپنے  کارناموں کا ذکر کرسکتے ہیں۔  غیر نصابی سرگرمیوں سے یونیورسٹی کو یہ سمجھنے میں آسانی ہوتی کہ کوئی طالب علم ان کی طلبہ برادریوں میں کس حد تک موزوں بیٹھتا ہے۔ اکثر ان ہی معلومات کا تجزیہ کرکے صلاحیت کے لحاظ سے اسکالر شپ جاری کی جاتی ہیں۔ طلبہ کوچاہیے کہ وہ درخواست میں مضمون تحریر کرتے وقت اپنی اقدارکو واضح کرتے ہوئے ان سرگرمیوں پر تفصیل سے روشنی ڈالیں۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: