ہوم » نیوز » تعلیم و روزگار

میرٹھ: بجٹ میں کمی سے اقتیتی طبقے پر کیا پڑے گا اثر

جانکار مانتے ہیں کہ اقلیتی فلاح کے مد میں اضافہ نہ ہونے سے اس کا سیدھا اثر فلاحی اسکیموں پر پڑنا لازمی ہے۔ خاص طور پر مدرسہ ماڈرنائزیشن کے تعلق سے عمل میں لائی جا رہی مختلف اسکیموں کو کامیاب بنانے میں بجٹ کی کمی پریشانی کا سبب ہو سکتی ہے۔

  • Share this:
میرٹھ: بجٹ میں کمی سے اقتیتی طبقے پر کیا پڑے گا اثر
جانکار مانتے ہیں کہ اقلیتی فلاح کے مد میں اضافہ نہ ہونے سے اس کا سیدھا اثر فلاحی اسکیموں پر پڑنا لازمی ہے۔ خاص طور پر مدرسہ ماڈرنائزیشن کے تعلق سے عمل میں لائی جا رہی مختلف اسکیموں کو کامیاب بنانے میں بجٹ کی کمی پریشانی کا سبب ہو سکتی ہے۔

مرکزی حکومت نے  مالی سال 2021/22 کے لئے وزارت براۓ اقلیتی امور کے بجٹ میں اضافہ کرنے کے بجائے کمی کر دی ہے۔ اقلیتی امور کے لیے بجٹ میں اس سال 219 کروڑ کی کمی کی گئی ہے۔ جانکار مانتے ہیں کہ اقلیتی فلاح کے مد میں اضافہ نہ ہونے سے اس کا سیدھا اثر فلاحی اسکیموں پر پڑنا لازمی ہے۔ خاص طور پر مدرسہ ماڈرنائزیشن کے تعلق سے عمل میں لائی جا رہی مختلف اسکیموں کو کامیاب بنانے میں بجٹ کی کمی پریشانی کا سبب ہو سکتی ہے۔


تعلیم اور ترقی کے دھارے میں مدرسوں کو شامل کرنے کا ارادہ ظاہر کرتے ہوئے مرکزی اور صوبائی حکومتوں نے مختلف اسکیموں کا اعلان کیا تھا . خاص طور پر مدرسوں کی جدیدکاری کے لئے مدرسہ طالب علموں کو ٹیکنیکل اور جدید علوم کی تعلیم سے بھی آراستہ کرنے کا منصوبہ پیش کیا گیا۔ تاہم بجٹ کی کمی کے سبب نہ تو گزشتہ سالوں میں مدارس میں اساتذہ کی کمی کو دور کرنے کے لئے تقرری عمل میں آئ اور نہ ہی اس سال کسی طرح کی امید اب بجٹ کے بعد کی جا رہی ہے۔

جانکاروں کے مطابق لاک ڈاؤن کے بعد سے بدتر معاشی حالات میں عام لوگ بجٹ سے خاص اُمید کر رہے تھے   اور خاص طور پر اقلیتی طبقے کو سرکاری فلاحی اسکیمیں جس میں مدارس کے علاوہ کاروبار کے لیے لون کی سہولیات فراہم کی جاتی تھی اب  بجٹ میں کمی کے سبب ضرورت افراد کی بڑی تعداد اس طرح کی اسکیموں کا مکمّل فائدہ حاصل کرنے سے محروم ره جائیگی۔  سماج کے کسی شعبہ یا طبقے کی فلاح و بہبود کے لئے محض فلاحی اسکیموں کے اعلان کی نہیں بلکہ ان اسکیموں کو کامیاب بنانے کے لئے بجٹ کی کمی کو دور کرنے کی ضرورت ہوتی ہے لیکن وزارت  اقلیتی امور کے بجٹ میں اس سال کمی کیے جانے  سے فلاحی اسکیموں کے نفاذ کو لیکر حکومت کی نیت کا اندازہ لگانا مشکل نہیں۔

Published by: Sana Naeem
First published: Feb 05, 2021 12:00 AM IST