ہوم » نیوز » تعلیم و روزگار

Covid-19 & Education: کووڈ۔19 کے دور میں چھوٹے بچوں کی سیکھنے کی صلاحیت بری طرح متاثر، والدین بیحد پریشان: سروے

ایک سروے کے تحت جب والدین سے ان کے بچوں کی تعلیمی سرگرمیوں کے بارے میں پوچھا گیا تو والدین نے بتایا کہ پہلے تو اسکولس بند ہونے کی وجہ سے بچے دن بھر گھر پر ہی رہ رہے ہیں اور دوسری بات اس دوران بچے نئی چیزوں کو سیکھنے کے لیے فکر مند نظر آرہے ہیں۔

  • Share this:
Covid-19 & Education: کووڈ۔19 کے دور میں چھوٹے بچوں کی سیکھنے کی صلاحیت بری طرح متاثر، والدین بیحد پریشان: سروے
ایک سروے کے تحت جب والدین سے ان کے بچوں کی تعلیمی سرگرمیوں کے بارے میں پوچھا گیا تو والدین نے بتایا کہ پہلے تو اسکولس بند ہونے کی وجہ سے بچے دن بھر گھر پر ہی رہ رہے ہیں اور دوسری بات اس دوران بچے نئی چیزوں کو سیکھنے کے لیے فکر مند نظر آرہے ہیں۔

ہندوستان میں کورونا وائرس (کووڈ۔19) کی بڑھتی ہوئے شدت کے بعد مارچ 2020 کے بعد سے ہی ملک بھر کے اسکول بند کردیئے گئے ہیں جس کی وجہ سے طلبا کی تعلیمی سرگرمیاں یا تو معطل ہیں یا پھر محدود پیمانے پر آن لائن طور پر تعلیم جاری ہے۔ اسی ضمن میں والدین نے محسوس کیا ہے کہ ان کے بچوں میں سیکھنے کی صلاحیت کم ہوتی جارہی ہے۔ کورونا وائرس کو روکنے کے لیے اسکول تو بند ہیں لیکن آن لائن (online) سیکھنے کا انحصار ایک متبادل ذریعہ بن چکا ہے۔ وبائی بیماری کی وجہ سے آن لائن پری اسکول بچوں کو منظم انداز میں سیکھنے کا موقع پیش کرتا ہے۔


ایک سروے کے تحت جب والدین سے ان کے بچوں کی تعلیمی سرگرمیوں کے بارے میں پوچھا گیا تو والدین نے بتایا کہ پہلے تو اسکولس بند ہونے کی وجہ سے بچے دن بھر گھر پر ہی رہ رہے ہیں اور دوسری بات اس دوران بچے نئی چیزوں کو سیکھنے کے لیے فکر مند نظر آرہے ہیں۔ جس میں پینٹگ، ویڈیو ایڈیٹنگ، موسیقی، کووڈنگ اور حروف تہجی کو سیکھنے کا عمل جاری ہے۔

مزید برآں سروے میں یہ بھی انکشاف کیا گیا ہے کہ بہت سے والدین کا خیال ہے کہ جہاں تعلیمی سرگرمیوں کو کسی حد تک منظم کیا جارہا ہے وہیں بچوں کے لیے سیکھنے کے عمل کو آسان بنانے کی بھی کوششیں ہورہی ہے۔ اس کے نتائج پر بھی توجہ دی جارہی ہے۔


والدین اپنے بچے کی معاشرتی اور جسمانی نشونما کے بارے میں بھی پریشان ہیں۔ وبائی مرض کی دوسری لہر سے قبل اسکولوں کی بندش کی مدت میں توسیع کی وجہ سے والدین اور سرپرست اور بھی زیادہ فکر مند نظر آرہے ہیں۔ والدین اپنے بچے کے ترقیاتی سنگ میل پر سیکھنے کے دو سال کے فرق کے منفی اثرات کے بارے میں بھی پریشان ہیں۔

سروے کے نتائج کے مطابق 80 فیصد والدین ہوم بڈی (یوروکیڈز EuroKids کا ایک آن لائن پری اسکولنگ ایپ) میں اپنے بچوں کو داخلہ دلایا تھا۔ انھوں نے اس کی کارکردگی پر اپنی رضامندی کا اظہار کیا اور ان میں سے بیشتر نے دیگر سرپرستوں کو بھی اس سلسلے میں رہنمائی کی۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: May 09, 2021 07:27 PM IST