ہوم » نیوز » تعلیم و روزگار

یونیورسٹی اساتذہ کی بھرتی کے لئے تعلیمی سال 2021-2022 سے پی ایچ ڈی، نیٹ ہونا لازمی!

اس سے قبل جو لوگ پی ایچ ڈی کی ڈگری رکھتے ہیں یا NET ماسٹرز کی ڈگری کے ساتھ اہل تھے، وہ اسسٹنٹ پروفیسر، انٹری لیول پوزیشن کے لیے یونیورسٹیوں میں درخواست دینے کے اہل تھے۔ اسسٹنٹ پروفیسرز کی تقرری کے دوران NET امتحان میں کامیاب ہونے والے امیدواروں کو 5 سے 10 نمبر تک ویٹ ویج دیا گیا تھا، جبکہ پی ایچ ڈی امیدواروں کو 30 نمبروں کا ویٹ دیا گیا تھا۔

  • Share this:
یونیورسٹی اساتذہ کی بھرتی کے لئے تعلیمی سال 2021-2022 سے پی ایچ ڈی، نیٹ ہونا لازمی!
یونیورسٹی اساتذہ کی بھرتی کے لئے تعلیمی سال 2021-2022 سے پی ایچ ڈی، نیٹ ہونا لازمی!

نئی دہلی: ایک نئے ضابطے میں جو تعلیمی سیشن 2021-2022 سے لاگو ہوگا۔ پی ایچ ڈی اور قومی اہلیت ٹیسٹ (نیٹ) یونیورسٹیوں میں اساتذہ کی بھرتی کے لئے لازمی کردیا گیا ہے۔ اس قاعدے کو جو 2018 میں پیش کیا گیا تھا، اس سال لاگو کیا جائے گا۔


اب سے اسسٹنٹ پروفیسر کے عہدے پر تقرری کے لئے امیدواروں کو پی ایچ ڈی کی ڈگری رکھنی ہوگی۔


  • پہلے کیا معیار تھا؟


اس سے قبل جو لوگ پی ایچ ڈی کی ڈگری رکھتے ہیں یا NET ماسٹرز کی ڈگری کے ساتھ اہل تھے، وہ اسسٹنٹ پروفیسر، انٹری لیول پوزیشن کے لئے یونیورسٹیوں میں درخواست دینے کے اہل تھے۔ اسسٹنٹ پروفیسرز کی تقرری کے دوران NET امتحان میں کامیاب ہونے والے امیدواروں کو 5 سے 10 نمبر تک ویٹ ویج دیا گیا تھا، جبکہ پی ایچ ڈی امیدواروں کو 30 نمبروں کا ویٹ دیا گیا تھا۔ اس سے ان لوگوں کے خلاف ناانصافی ہوگی۔ جو صرف NET امتحانات کوالیفائی کئے ہیں۔

سال 2018 میں یونیورسٹی گرانٹس کمیشن (University Grants Commission ) کے ان نئے ضوابط کا اعلان اس وقت کے مرکزی وزیر پرکاش جاوڈیکر (Prakash Javadekar) نے کیا تھا۔ اب یونیورسٹیوں کے لئے نئی بھرتی صرف پی ایچ ڈی ہولڈرز کی ہوگی۔ لہذا 2021 سے اسسٹنٹ پروفیسر (داخلہ سطح کی پوزیشن) کو پی ایچ ڈی کرنا پڑے گا۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: Jul 12, 2021 08:51 PM IST