உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Schools closed: کووڈ۔19 کے پیش نظر کونسی ریاست میں اسکولز ہیں بند؟ جانیے تفصیلات

    تلنگانہ حکومت نے اعلان کیا کہ اسکول 8 سے 16 جنوری تک بند رہیں گے۔

    تلنگانہ حکومت نے اعلان کیا کہ اسکول 8 سے 16 جنوری تک بند رہیں گے۔

    تین جنوری کو تلنگانہ حکومت نے اعلان کیا کہ اسکول 8 سے 16 جنوری تک بند رہیں گے۔ تلنگانہ کے چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے ایک جائزہ میٹنگ کے دوران تمام تعلیمی اداروں میں تعطیلات کا اعلان کیا۔ اسی طرح کئی ریاستوں میں تعطیلات کا اعلان کیا گیا ہے۔ جائیے مکمل تفصیلات:

    • Share this:
      School closure: ہندوستان میں عالمی وبا کورونا وائرس (Covid-19) کے بڑھتے ہوئے کیسیز کے درمیان مرکزی حکومت نے کئی ریاستی حکومتوں کے ساتھ مل کر طلبہ کی حفاظت اور کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے اسکولوں کو ایک بار پھر بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ پچھلے سات دنوں کے اندر کئی ریاستی حکومتوں نے اسکولز کو فزیکل کلاسیز بند کرنے اور صرف آن لائن کلاسیز جاری رکھنے کی ہدایت دی ہے۔ اسکولز کے ساتھ ساتھ کئی ریاستوں نے کالج اور دیگر تعلیمی ادارے بھی بند کردیئے ہیں۔

      دہلی:

      تین جنوری 2022 سے کورونا کے کیسیز میں اچانک اضافے کے درمیان دہلی بھر کے تمام اسکول بند کردیئے گئے ہیں۔ اگلے احکامات جاری ہونے تک اسکول بند کردیئے گئے ہیں۔ مرکز کے ایئر کوالٹی پینل نے کہا کہ این سی آر میں تمام اسکول، کالج اور تعلیمی ادارے بند رہیں گے۔ سوائے امتحانات اور لیبارٹری پریکٹیکل کے انعقاد کے صرف آن لائن تعلیم کی اجازت دیں گے۔

      آسام:

      آسام حکومت نے جمعہ کو ریاست میں اومی کرون (Omicron) کیسوں کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے تازہ کووڈ۔19 رہنما خطوط کے ایک سیٹ پر پابندیوں کو سخت کردیا ہے۔ پانچویں جماعت تک کے تمام طلبہ کے لیے اسکول 30 جنوری تک بند رہیں گے۔ وہیں 8 جنوری سے ریاست بھر میں پانچویں جماعت تک کے تمام سرکاری اور نجی اسکول 30 جنوری تک بند رہیں گے۔ گوہاٹی میں کلاس تک کے طلبہ کے لیے اسکول بند رہیں گے۔ نوویں تا کیارویں کی فزیکل کلاسز روٹیشن موڈ (ہفتے میں تین دن) چلائی جائیں گی جبکہ بارہویں، انجینئرنگ کالجز، میڈیکل کالجز اور ٹیکنیکل انسٹی ٹیوٹ معمول کے مطابق چلیں گے۔

      گجرات:

      7 جنوری کو گجرات حکومت نے نوویں جماعت تک کے طلبہ کے لیے فزیکل کلاسیز کے لیے اسکولز کو بند کرنے کا فیصلہ کیا۔ جمعہ کو ریاستی حکومت نے اعلان کیا کہ 31 جنوری 2022 تک پہلی جماعت سے نوویں جماعت کے طلبہ کے لیے اسکول میں ذاتی طور پر کوئی کلاس نہیں ہوگی۔ فیصلے میں مزید کہا گیا ہے کہ کلاس 9 سے اوپر کے طلبہ اور پوسٹ گریجویٹ کورسز کے ساتھ ساتھ مسابقتی امتحانات کے لیے کوچنگ سینٹرز 50 فیصد صلاحیت کے ساتھ چل سکتے ہیں۔

      اوڈیشہ:

      7 جنوری کو اوڈیشہ حکومت نے کووڈ-19 کے بڑھتے ہوئے کیسوں کے پیش نظر 10 جنوری سے میڈیکل کالجوں اور نرسنگ کالجوں کے علاوہ تمام اسکول، کالج اور تکنیکی تعلیمی اداروں کو بند کرنے کا حکم دیا۔ یہ حکم ایک دن بعد سامنے آیا ہے جب اوڈیشہ کے تمام اسکولز کو یکم فروری تک بند کرنے کی ہدایت دی گئی تھی جس میں بورڈ کے امتحانات کے طلبہ کے لیے شکوک و شبہات کو ختم کرنے والی کلاسوں کو چھوڑ دیا گیا تھا۔

      مہاراشٹر:

      5 جنوری کو مہاراشٹر حکومت نے کالجوں اور یونیورسٹیوں میں فزیکل کلاسیز کو 15 فروری تک بند کرنے کا فیصلہ کیا۔ اس فیصلے کا اطلاق تمام ریاستی، ڈیمڈ، پرائیویٹ یونیورسٹیوں کے ساتھ ساتھ تکنیکی اداروں اور اس سے منسلک کالجوں پر بھی ہو گیا ہے۔ یہ حکم ایک دن بعد آیا ہے جب مہاراشٹر حکومت نے پونے شہر اور ضلع میں کلاس 1 سے 8 تک تمام آف لائن کلاسز کو 30 جنوری تک بند کرنے کا فیصلہ لیا تھا۔

      گوا:

      3 جنوری کو گوا حکومت نے اومی کرون ویرینٹ کے بڑھتے ہوئے کیسوں کی روشنی میں اسکولز اور کالجز کو دوبارہ 26 جنوری تک بند رکھنے کا فیصلہ کیا۔ اس فیصلے میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ 11 ویں اور 12 ویں کے طلبہ کو کووڈ 19 ویکسینیشن کروانے کے لیے اسکول جانا ہوگا، جس کے بعد انہیں 26 جنوری 2022 تک کلاسوں میں جانے کی ضرورت نہیں ہوگی۔

      جھارکھنڈ:

      کووڈ-19 کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے جھارکھنڈ حکومت نے اپنے اسکول، کالج، کوچنگ اداروں اور دیگر تعلیمی اداروں کو 15 جنوری 2022 تک بند رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔

      ہریانہ:

      3 جنوری کو وزیر اعلیٰ منوہر لال کھٹر کے دفتر سے ایک حکم جاری کیا گیا جس میں کہا گیا تھا کہ ہریانہ میں تمام یونیورسٹیاں اور کالج 12 جنوری 2022 تک بند رہیں گے۔ سرکاری حکم میں لکھا گیا کہ ’تمام یونیورسٹیز اور کالجز (چاہے وہ ریاستی/سرکاری ہوں یا نجی) 12 جنوری 2022 تک بند رہیں گے۔ تاہم عملہ کالجوں/یونیورسٹیوں میں معمول کے مطابق حاضر ہونا چاہیے اور اداروں سے فیکلٹی کے ذریعے آن لائن کلاسز لی جائیں گی۔ شیڈول کے مطابق. پرنسپل اس بات کو یقینی بنائیں گے کہ کلاسز کا باقاعدگی سے آن لائن انعقاد ہو‘۔

      بہار:

      7 جنوری کو بہار حکومت نے اعلان کیا کہ تمام اسکول، کالج، کوچنگ انسٹی ٹیوٹ اور ہاسٹل 21 جنوری 2022 تک بند رہیں گے۔ اعلان میں مزید کہا گیا ہے کہ پری اسکول اور 1 سے 8 تک کی کلاسیز بند رہیں گی اور آن لائن کلاسز جاری رہیں گی۔ کلاس 9 ویں سے 12 ویں تک کے تعلیمی ادارے 50 فیصد صلاحیت کے ساتھ کام کریں گے۔

      پنجاب:

      4 جنوری کو پنجاب حکومت نے اعلان کیا کہ اس کے تمام اسکول اور کالج 15 جنوری 2022 تک آف لائن کلاسز کے لیے بند رہیں گے۔ 7 جنوری کو یہ اعلان کیا گیا تھا کہ کووڈ 19 کے کسیوں میں اضافہ دیکھنے کے بعد چندی گڑھ میں اسکول، کالج، کوچنگ سینٹرز اور دیگر تمام تعلیمی ادارے اگلے نوٹس تک بند کردیئے گئے ہیں۔ تعلیم کے صرف آن لائن موڈ کی اجازت ہے۔

      اتر پردیش:

      5 جنوری کو اتر پردیش حکومت نے اعلان کیا کہ 6 جنوری سے 16 جنوری تک دسویں جماعت تک کے طلبہ کے اسکول بند رہیں گے۔ اس حوالے سے ایک نوٹس جاری کیا گیا جس میں کہا گیا ہے کہ دسویں جماعت تک کے طلبہ کے لیے اسکول بند رہیں گے۔ تاہم 10ویں جماعت تک کے طلبہ اور 11ویں اور 12ویں جماعت کے طلبہ کے لیے آن لائن کلاسز جاری رہیں گی۔ نوٹس میں مزید کہا گیا ہے کہ 15 سے 18 سال کی عمر کے طلبہ کے لیے کووڈ 19 ویکسی نیشن مہم کے لیے اسکولوں میں ویکسی نیشن کیمپ لگائے جائیں گے۔

      تلنگانہ:

      تین جنوری کو تلنگانہ حکومت نے اعلان کیا کہ اسکول 8 سے 16 جنوری تک بند رہیں گے۔ تلنگانہ کے چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے ایک جائزہ میٹنگ کے دوران تمام تعلیمی اداروں میں تعطیلات کا اعلان کیا۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: