உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مدرسہ بورڈ کے تاخیر سے نتائج کے اعلان کا خمیازہ بھگت رہے ہیں طلبا، کالج یونیورسٹی میں داخلے کی راہ ہوئی مشکل

    مدرسہ بورڈ نتائج کے اعلان میں تاخیر سے جہاں طالب علموں کے لیے اچھے کالج اور یونیورسٹی میں داخلہ کی راہ مشکل ہو گئی ہے۔

    مدرسہ بورڈ نتائج کے اعلان میں تاخیر سے جہاں طالب علموں کے لیے اچھے کالج اور یونیورسٹی میں داخلہ کی راہ مشکل ہو گئی ہے۔

    مدرسہ بورڈ نتائج کے اعلان میں تاخیر سے جہاں طالب علموں کے لیے اچھے کالج اور یونیورسٹی میں داخلہ کی راہ مشکل ہو گئی ہے۔

    • Share this:
    یو پی مدرسہ بورڈ نے سیکنڈری اور سینئر سیکنڈری کے نتائج کا اعلان ستمبر کے آخری ہفتے میں کیا ہے مدرسہ بورڈ کی جانب سے نتائج کے اعلان میں ہوئی اس تاخیر کا خمیازہ اب طالب علموں کو بھگتنا پڑ رہا ہے۔ کالج اور یونیورسٹی میں داخلہ لیکر اعلیٰ تعلیم کا ارادہ رکھنے والے مدرسہ طالب علموں کے لیے ایک طرح جہاں داخلے کی راہ مشکل ہو گئی ہے وہیں کامل اور فاضل کے امتحانات بھی مکمّل نہ ہونے سے آگے کے تعلیمی نصاب کو لیکر بھی طالب علم فکرمند ہے۔
    یو پی میں سبھی بورڈ کے نتائج آنے کے بھی کافی وقت بعد مدرسہ بورڈ نے اب جاکر سیکنڈری اور سینئر سیکنڈری کے نتائج کا اعلان کیا ہے مدرسہ منتظمین کے مطابق اس سال بغیر امتحانات کے طالب علموں کو پروموٹ کیے جانے کے باوجود مدرسہ بورڈ نتائج کے اعلان میں تاخیر سے جہاں طالب علموں کے لیے اچھے کالج اور یونیورسٹی میں داخلہ کی راہ مشکل ہو گئی ہے۔ وہیں مدارس میں داخلے کا سلسلہ بھی متاثر ہوا ہے۔

    وہیں نتائج کے اعلان کے بعد بھی طالب علموں کی مشکلیں کم ہوتی نظر نہیں آ رہی ہے بورڈ کے ذریعہ آن لائن جاری مارک شیٹ میں تھیوری کے نمبر نمایاں نہ ہونے کی کئی اضلاع سے شکایتیں بھی سامنے آ رہی ہیں۔ دوسری طرف اس وقت کامل کے پہلے اور دوسرے اور فاضل کے پہلے سال کے امتحانات کا سلسلہ اب شروع ہوا ہے جس کے نتیجے کب تک جاری ہونگے اس کا بھی کچھ پتہ نہیں ہے جب کہ تعلیمی سیشن کا آدھے سے زیادہ وقت گزر چکا ہے۔

    بورڈ کے سالانہ امتحانات اور نتائج میں تاخیر یو پی مدرسہ بورڈ کی روش رہی ہے لیکن اس سال پروموشن کے ذریعہ نتیجے جاری کرنے میں بھی مدرسہ تعلیمی بورڈ دوسرے تعلیمی بورڈوں سے پیچھے رہا جسکا خمیازہ اب طالب علموں کو بھگتنا پڑ رہا ہے۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: