ہوم » نیوز » تعلیم و روزگار

بڑی خبر: یوپی کے کنٹینمینٹ زون کے باہر 15 اکتوبر سے کھل سکتے ہیں اسکول، طلبا کو اسکول جانے کیلئے والدین سے لینی ہوگی اجازت

اسکول آنے والے طلبا کو والدین سے اجازت لینی ہوگی۔ حاضری کو مسلط نہیں کیا جائے گا اور والدین کے اجازت پر ہی بچے اسکول جائیں گے۔ اسکولوں کے سلسلے میں ریاستیں اپنے معیاری طریقہ کار وضع کریں گی۔

  • Share this:
بڑی خبر: یوپی کے کنٹینمینٹ زون کے باہر 15 اکتوبر سے کھل سکتے ہیں اسکول، طلبا کو اسکول جانے کیلئے والدین سے لینی ہوگی اجازت
اسکول آنے والے طلبا کو والدین سے اجازت لینی ہوگی۔

مرکزی وزرات داخلہ کی جانب سے ان لاک ۔5 کی تازہ ہدایات جاری کرنے کے ایک دن بعد اترپردیش حکومت نے بھی جمعرات کو نئی گائیڈلائنس جاری کی ہیں جس کے تحت اسکول اور تعلیم ادارے اور کوچنگ سینٹر 15 اکتوبر کے بعد مرحلے وار طریقے سے کھولے جاسکیں گے۔ نئی گائیڈ لائنس کے مطابق اسکول منیجمنٹ ضلع انتظامیہ سے رابطہ کرکے اپنے ادارے کو دوبارہ کھول سکتا ہے۔ ریاست کے ایڈیشنل چیف سکریٹری اونیش اوستھی نے جمعرات کو بتایا کہ ریاست میں ان لاک 5 کی گائیڈ لائنس وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ کی ہدایت پر جاری کی گئی ہیں۔ جس کے مطابق نامزد علاقے سے باہر کے تمام اسکول اور کوچنگ انسٹی ٹیوٹ 15 اکتوبر کے بعد مرحلہ وار کھولے جائیں گے۔


یہ فیصلہ ضلعی انتظامیہ اسکول اور انسٹی ٹیوٹ کے انتظام سے مشورہ کرنے اور صورتحال کا جائزہ لینے کے بعد لیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ آن لائن فاصلاتی تعلیم کی اجازت جاری رہے گی اور اس نظام کو ترجیح دی جائے گی۔ جہاں اسکولوں میں آن لائن کلاسز چل رہی ہیں اور کچھ طلباء فزیکلی (جسمانی) طور پر کلاسوں میں داخلے کے بجائے آن لائن کلاسوں میں داخلے کے خواہاں ہیں ، تو ان کو اس کی دی جاسکتی ہے۔


اسکول آنے والے طلبا کو والدین سے اجازت لینی ہوگی۔ حاضری کو مسلط نہیں کیا جائے گا اور والدین کے اجازت پر ہی بچے اسکول جائیں گے۔ اسکولوں کے سلسلے میں ریاستیں اپنے معیاری طریقہ کار وضع کریں گی۔ کالجوں کو کھولنے کے بارے میں فیصلہ تعلیم کی وزارت کرے گی، لیکن اس کے لئے اسے وزارت داخلہ کے ساتھ صلاح و مشورہ اور حالات کا جائزہ لینا ہوگا۔ کالجوں میں بھی آن لائن تعلیم کو ترجیح دی جائے گی۔ تحقیق کرنے والوں کے لئے اعلی تعلیمی اداروں اور دیگر سائنس و ٹکنالوجی کے پوسٹ گریجویٹ کورسز کے لئے ادارے شرائط کے ساتھ 15 اکتوبر سے کھولے جاسکتے ہیں۔ ریاست اور مرکز کے زیر انتظام خطے کنٹنمنٹ زون کے باہر 15 اکتوبر کے بعد سماجی، تعلیمی، کھیل، تفریحی، ثقافتی، مذہبی اور سیاسی پروگرام میں 100 سے زیادہ لوگوں کے شامل ہونے کی شرط کے ساتھ اجازت دے سکتے ہیں۔ اس کے لئے بھی معیار پر عمل کرنا لازمی ہوگا۔ ریاست یا مرکز کے زیر انتظام خطوں کو کنٹنمنٹ زون کے باہر لاک ڈاؤن نافذ کرنے کا حق نہیں ہوگا۔ اس کے لئے انہیں مرکزی حکومت سے پہلے اجازت لینی ہوگی۔ ریاستوں کے اندر اور ایک سے دوسری ریاست میں آمد و رفت پر بھی کسی طرح کی پابندی نہیں لگائی جائے گی۔ ملک بھر میں کووڈ منیجمنٹ سے متعلق پروٹوکول نافذ رہے گا اور آروگیہ سیتو ایپ کے استعمال کو فروغ دیا جائے گا۔



وہیں 15 اکتوبر سے بند مقامات پر یہ پروگرام 50 فیصدی صلاحیت یا زیادہ سے زیادہ 200افراد کی موجودگی کے ساتھ منعقد کئے جاسکیں گے اس دوران جسمانی فاصلہ،ہاتھ سینیٹائزینش،تھرمل اسکریننگ وغیرہ کے اہتمام کا خاص خیا رکھنا ہوگا۔ کھلے میں منعقد کئے جانے والے فکشن کو اس علاقے میں نافذ گائیڈلائنس پر عمل کرنا ہوگا۔ گائیڈلائنس کے مطابق بچوں کو اپنی رضامندی اور والدین کے تحریری اقرا ر نامہ کے ساتھ کلاس میں شرکت کرنے کی اجازت ہوگی۔15اکتوبر سے سنیما ہال بھی کھلیں گےساتھ عوامی لائبری کو بھی کھلنے کی اجازت ہوگی۔ اترپردیش کی گائیڈ لائنس مرکزی حکومت کی جانب سے جاری گائیڈ لائنس کے مماثل ہیں ۔ریاستی حکومت نے مرکزی وزارت داخلہ کے تمام سفارشات کو حاصل کیا ہے۔
Published by: sana Naeem
First published: Oct 03, 2020 02:21 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading