உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    لاؤڈاسپیکر سے اذان کا معاملہ پھر گرمایا ، جاوید اختر نے کی سونونگم کی حمایت ، کہی یہ بات ؟ ، چوطرفہ تنقید

    file photo

    file photo

    گلوکار سونونگم کے ذریعہ تقریباً ایک سال قبل مساجد پرنصب لاؤڈاسپیکر پر دی جانے والی اذان دینے کے بارے میں ایک متنازع بیان کی نغمہ نگار جاوید اختر نے حمایت کی ہے

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:
      ممبئی : گلوکار سونونگم کے ذریعہ تقریباً ایک سال قبل مساجد پرنصب لاؤڈاسپیکر پر دی جانے والی اذان دینے کے بارے میں ایک متنازع بیان کی نغمہ نگار جاوید اختر نے حمایت کی ہے اور کہا کہ مسجد ہی نہیں بلکہ دیگر عبادت گاہوں پر لاؤڈاسپیکر نصب نہیں کیے جانے چاہئے ۔ایک ٹویٹ کے ذریعہ انہوں نے یہ باتیں کہیں ۔
      جاوید اختر نے اپنے ٹویٹ میں کہا ہے کہ ’’سونو نگم نے مسجد پر لاؤڈاسپیکر نصب کیے جانے پر جو بیان دیا ،اس سے میں اتفاق کرتا ہوں،مسجد ہی نہیں بلکہ رہائشی علاقوں میں واقع دیگر مذہبی مقامات پر لاؤڈاسپیکر نصب نہیں کیے جانے چاہئے اور ان کی اجازت نہیں دی جانا چاہئے ‘‘۔
      جاوید اختر کے بیان کی شدیدمذمت کی جارہی ہے ، کیونکہ انہوں نے ایک سال قبل دیے جانے والے سونونگم کے بیان کو ایک بار پھر اکھاڑا ہے جبکہ ایک سال کے عرصے میں ان کے بیان کو بھلا دیا گیا تھا ۔

      First published: