ہوم » نیوز » انٹرٹینمنٹ

کنگنا رناوت کے بعد اب ان کی بہن کا بڑا بیان ، کہا : ان کے بھڑکانے پر ٹوٹا سشانت سنگھ راجپوت اور انکتا لوکھنڈے کا رشتہ

کنگنا رناوت (Kangana Ranaut) نے اداکار کی موت پر اپنا رد عمل ظاہر کیا تھا اور اب ان کی بہن رنگولی چندیل (Rangoli Chandel) نے بھی سشانت سنگھ راجپوت (Sushant Singh Rajput) کی خودکشی معاملہ میں انسٹاگرام پر طویل پوسٹ شیئر کیا ہے ۔

  • Share this:
کنگنا رناوت کے بعد اب ان کی بہن کا بڑا بیان ، کہا : ان کے بھڑکانے پر ٹوٹا سشانت سنگھ راجپوت اور انکتا لوکھنڈے کا رشتہ
کنگنا رناوت کے بعد اب ان کی بہن کا بڑا بیان ، ان کے بھڑکانے پر ٹوٹا سشانت سنگھ راجپوت اور انکتا لوکھنڈے کا رشتہ

بالی ووڈ اداکار سشانت سنگھ راجپوت کی خودکشی کی خبر نے نہ صرف بالی ووڈ بلکہ پورے ملک کو جھنجھور کر رکھ دیا ہے ۔ جہاں ایک طرف سوشل میڈیا کے ذریعہ ہر کوئی ان کی موت پر غم کا اظہار کررہا ہے تو وہیں دوسری طرف اقربا پروری پر بھی بحث تیز ہوگئی ہے ۔ سوشل میڈیا پر بالی ووڈ میں آوٹ سائیڈر کو کنارے کرنے کو لے کر طرح طرح کے رد عمل دیکھنے کو مل رہے ہیں ۔ حال ہی میں کنگنا رناوت نے اداکار کی موت پر اپنا رد عمل ظاہر کیا تھا اور اب ان کی بہن رنگولی چندیل نے بھی سشانت سنگھ راجپوت کی خودکشی معاملہ میں انسٹاگرام پر طویل پوسٹ شیئر کیا ہے ۔


رنگولی چندیل نے سشانت سنگھ راجپوت ، انکتا لوکھنڈے اور ان کے دوست سندیپ سنگھ کی ایک تصویر شیئر کرتے ہوئے یہ پوسٹ لکھی ہے ۔ اس سے پہلے سندیپ سنگھ نے سشانت سنگھ راجپوت کو یاد کرتے ہوئے یہ تصویر شیئر کی تھی ، جس میں انہوں نے اپنے دوست کو یاد کرتے ہوئے کافی کچھ لکھا تھا ۔ سندیپ کی اسی پوسٹ پر رد عمل ظاہر کرتے ہوئے رنگولی نے لکھا : بالکل صحیح سندیپ ، انہوں نے اپنے لئے ایک بڑا مہنگا پی آر ہائر کیا تھا ، جو فلم مافیاوں کیلئے کام کرتی تھی ۔ انہوں نے سشانت کو کہا کہ انہیں اپنے لئے کوئی دوسرا پارٹنر تلاش کرنا ہوگا ۔ یہاں لوگ پیار نہیں کرتے ، کیونکہ یہاں لوگ صرف برانڈنگ کیلئے پیار میں ہوتے ہیں ۔ اپنے لئے الگ برانڈ بناو ۔


رنگولی نے لکھتی ہیں کہ ان کے مہنگے پی آر نے کہا کہ یہ وہ وقت ہے جب تمہیں اپنی کمزرویوں کو بھولنا ہوگا اور کسی سپر ماڈل کو ڈیٹ کرنا ہوگا ۔ رنویر یا رنبیر کی طرح ، کسی ایسے سے رابطہ بناو جو بڑے فلمی بیک گراونڈ سے آتا ہو ۔ یہ تمہاری شبیہ کیلئے ٹھیک نہیں ہے کہ تم کسی ٹی وی اداکارہ کے ساتھ ملاڈ میں رہتے ہو ۔ تمہیں لمبی ریس میں شامل ہونا ہے تو ان کی طرح چلو ، ان کی طرح برتاو کرو ، نہیں تو تم اسٹرگلنگ ایکٹر بن کر ہی رہ جاو گے ۔




 




View this post on Instagram




 

So nicely written Sandeep, he hired a fancy Bollywood PR, she works for movie mafia she told him you need exciting pair to create media frenzy like your contemporaries, here people don’t fall in love because they are in love here every thing is branding, build your brand this is the time forget your personal weaknesses now, date a super model like Ranveer or Ranbir or someone with connections who comes from film family, it’s not good for your image to live in Malad with a tv actress if you want to be in the big league you must behave like them, walk like them, live where they live otherwise you will always be a struggling tv actor, Ankita and Shushant had bought a house together he left, she was devastated but they broke his backbone, he shifted to Bandra, these fake friends surrounded him he started to date super models but he was lost, when I had known this long back because of common friends I thought to myself all this won’t help, and that’s exactly what happened no matter what he did they didn’t accept him they didn’t let him live either, their strategy worked soon fake PR and friends left and he got lonely and depressed, they used this opportunity to hit him even harder with more nasty gossiping and bigger bans and finally he left ...... you are right wish there was a way to block those blinding lights of show business and it’s fake promises .... wish there was a way to block the mirage that movie mafia flash at every outsider who is loaded with talent, grit and ambition ... 💔


A post shared by Rangoli Chandel (@rangoli_r_chandel) on





انہوں نے مزید لکھا : انکتا اور سشانت نے نیا گھر خریدا تھا ، لیکن وہ انہیں چھوڑ کر چلے گئے ۔ اس سے انکتا بری طرح ٹوٹ گئی تھیں ، لیکن ان لوگوں نے اس کی کمر ہی توڑ دی تھی ۔ وہ باندرا شفٹ ہوگیا اور نقلی دوستوں نے اس کو گھیر لیا ۔ اس نے کسی سپر ماڈل کو ڈیٹ کرنا شروع کیا ، لیکن وہ خود کہیں کھو گیا ۔ جب ایک مشترکہ دوست کے ذریعہ مجھے یہ بہت پہلے پتہ چلا تو میں نے سوچا یہ کتنے دن کام کرے گا ۔ وہی ہوا ، اس سے مطلب نہیں کہ انہوں نے اس کو قبول نہیں کیا ۔ ان کی حکمت عملی کام آئی ، اس فرضی پی آر اور دوستوں نے اس کو چھوڑ دیا ۔ وہ تنہائی اور ڈپریشن کا شکار ہوگیا ۔ انہوں نے موقع کا استعمال کیا اور اس پر پابندی لگا کر اس کا استحصال کیا ۔ تم صحیح ہو ، کاش وہاں ان سب کو روکا جاسکتا ۔


First published: Jun 21, 2020 07:16 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading