ہوم » نیوز » انٹرٹینمنٹ

بارہ سال پہلے اس بوسے کی وجہ سے تنازعات میں پھنس گئی تھیں شلپا شیٹی

رپورٹس کے مطابق، یہ معاملہ اتنا گرم ہو گیا تھا کہ راجستھان کی ایک مقامی عدالت نے شلپا شیٹی اور رچرڈ کے خلاف گرفتاری کا حکم بھی دے دیا تھا۔

  • Share this:
بارہ سال پہلے اس بوسے کی وجہ سے تنازعات میں پھنس گئی تھیں شلپا شیٹی
بالی ووڈ اداکارہ شلپا شیٹی: فائل فوٹو

بالی ووڈ کی سپر اسٹار شلپا شیٹی آج اپنی 44 ویں سالگرہ منا رہی ہیں۔ یوں تو شلپا اپنی فلموں میں اداکاری کو لے کر کافی سرخیوں میں بنی رہیں ، لیکن ایک دور ایسا بھی آیا جب ایک بوسے نے شلپا کو بہت مشکل میں ڈال دیا تھا۔ دراصل کافی سالوں پہلے دنیا کے سب سے سیکسی مرد کا خطاب حاصل کرنے والے امریکی اداکار رچرڈ گئیر فلموں کے علاوہ ایک اور وجہ سے ہندوستانی میڈیا میں چھا گئے تھے۔


یہ ان کا کوئی 'دیسی پروجیکٹ' نہیں بلکہ کچھ اورتھا۔ بات سال 2007 کی ہے جب رچرڈ نے اسٹیج پر 'دیسی لڑکی' شلپا شیٹی کے رخسار کے سرعام بوسے لئے تھے۔ اس بوسے کے بعد ہندوستان میں ہر کسی کو پتہ ہو گیا تھا کہ رچرڈ گیئر کون ہیں۔ بات 2007 کی ہے جب دہلی میں ایڈز کے تئیں بیداری کے تحت ایک پروگرام ہو رہا تھا۔


اس پروگرام میں شلپا شیٹی اور رچرڈ گئیر بطور مہمان پہنچے تھے۔ یہاں جب شلپا رچرڈ کو لے کر منچ پر آئیں اور کچھ بولنے لگیں تو رچرڈ ان کے ہاتھ پر کس کرنے لگے۔ اس کے بعد انہوں نے شلپا کو گلے لگایا اور ان کے رخسار کے سرعام بوسے لینے لگے۔ رچرڈ اور شلپا کا یہ ویڈیو ہر طرف چھا گیا تھا۔ اس پر دونوں کو کافی تنقید کا سامنا بھی کرنا پڑا تھا۔ اس کے بعد رچرڈ نے اس پر معافی مانگی تھی۔ اس دوران ایک ویب سائٹ پر چھپی خبر کے مطابق، یہ معاملہ اتنا گرم ہو گیا تھا کہ راجستھان کی ایک مقامی عدالت نے شلپا شیٹی اور رچرڈ کے خلاف گرفتاری کا حکم بھی دے دیا تھا۔



بات کریں شلپا کے کیرئیر کی تو شلپا صرف اداکاری میں ہی اول نہیں بلکہ ایک اچھی ڈانسر بھی ہیں۔ وہیں، اپنے اسکولی دنوں کے دوران شلپا اپنی والی بال ٹیم کی کپتان ہوا کرتی تھیں اور سب سے بڑی بات یہ کہ شلپا کراٹے میں بھی بلیک بیلٹ تک پہنچ چکی ہیں۔ سال 2004 میں آئی ایک فلم’ پھر ملیں گے‘ میں شلپا نے ایڈ زدہ ایک شخص کا کردار نبھایا۔ اس فلم کے لئے وہ فلم فئیر ایوارڈ کے لئے نامزد بھی ہوئیں۔ شلپا نے اپنی اس فلم سے ہوئی ساری کمائی ایڈز متاثرین کے نام کر دی تھی۔
First published: Jun 08, 2019 12:02 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading