உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    لہنگا لینے گئی دلہن کو مشہور ڈیزائنر کی ٹیم نے کیا باڈی شیم ، مانگنی پڑ گئی معافی

    لہنگا لینے گئی دلہن کو مشہور ڈیزائنر کی ٹیم نے کیا باڈی شیم ، مانگنی پڑ گئی معافی ۔ (Photo @dr_cuterus/Instagram)

    انسٹاگرام انفلوئنسر ڈاکٹر تانیا نریندر (Dr. Tanya Narendra) نے لکھا : میں 12 سال کی عمر سے اپنی شادی میں ترون تہلیانی کا ڈیزائن کردہ لہنگا پہننا چاہتی تھی ، لیکن اب میں پھر کبھی وہاں نہیں جاؤں گی ۔ یہ بڑے ڈیزائنرس زیادہ وزن والے لوگوں سے کیوں ڈرتے ہیں ؟

    • Share this:
      ممبئی : مشہور فیشن ڈیزائنر ترون تہلیانی ایک تنازع میں پھنس گئے ہیں ۔ کچھ دنوں قبل ایک انسٹاگرام انفلوئنسر ڈاکٹر تانیا نریندر (Dr. Tanya Narendra) نے ان کے ایک اسٹور کے ملازمین پر باڈی شیمنگ کا الزام لگایا تھا ۔ تانیا نریندر نے سوشل میڈیا پر ایک پوسٹ لکھ کر اسٹور کے ملازمین کے رویے کی تنقید کی  ۔ تاہم معاملہ کو طول پکڑتا دیکھ کر ترون تہلیانی نے ایک بیان جاری کرکے معافی مانگ لی ہے ۔

      دراصل معاملہ یہ ہے کہ ڈاکٹر تانیا نریندر نے انسٹاگرام اکاؤنٹ سے اپنی شادی کی کچھ تصاویر شیئر کی ہیں ۔ انہوں نے ان تصاویر کے ساتھ ایک طویل نوٹ لکھا ہے ۔ نوٹ میں انہوں نے اسٹور ملازمین کی باڈی شیمنگ کرنے پر کھری کھوٹی سنائی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ میں 12 سال کی عمر سے اپنی شادی میں ترون تہلیانی کا ڈیزائن کردہ لہنگا پہننا چاہتی تھی ، لیکن اب میں پھر کبھی وہاں نہیں جاؤں گی ۔ یہ بڑے ڈیزائنرس زیادہ وزن والے لوگوں سے کیوں ڈرتے ہیں ؟ اور میں انیتا ڈونگرے کی ٹیم کی کتنی تعریف کروں جنہوں نے صرف 3 ہفتوں میں ایک بہترین فیٹنگ والا لہنگا بنانے میں کامیاب رہی ۔



      تانیا نریندر نے اپنی شادی میں انیتا ڈونگرے کم ڈیزائن کردہ سرخ رنگ کا لہنگا پہنا تھا ۔ انسٹاگرام پر شیئر کی گئی تصاویر میں وہ اس لہنگے میں نظر آرہی ہیں ۔ انیتا ڈونگرے کی ٹیم کی تعریف کرنے کے علاوہ انہوں نے یہ بھی لکھا کہ انہیں لہنگا بہت اچھا لگتا ہے۔ تانیا کی اس پوسٹ کو اب تک لاکھوں لوگ لائیک کر چکے ہیں ۔ معاملہ کو طول پکڑتا دیکھ کر ترون تہلیانی نے انسٹاگرام پر نوٹ لکھ کر معافی مانگ لی ہے۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: