உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    دلہن کی چھوٹی بہن نے ’بجلی بجلی‘ سانگ پر کیا شاندار ڈانس، وائرل ہوا ویڈیو

    دلہن کی بہن کے زبردست ڈانس کا ویڈیو ہوا وائرل۔

    دلہن کی بہن کے زبردست ڈانس کا ویڈیو ہوا وائرل۔

    ۔آپ کو بتادیں کہ بجلی بجلی گانا حال ہی میں ریلیز ہوا ہے، جو کافی وائرل ہورہا ہے۔ یہ گانا ایکٹریس شویتا تیواری کی بیٹی پلک تیواری کا ہے۔ اس گانے میں ہارڈی سندھو کے ساتھ اُن کی کیمسٹری قہر ڈھا رہی ہے۔

    • Share this:
      انٹرنیٹ کی دنیا (Social Media) میں اکثر کوئی نہ کوئی ڈانس ویڈیو سرخیاں بٹور ہی لیتا ہے۔ ان میں سے کچھ ویڈیو تو اتنے پاپولر ہوجاتے ہیں کہ ہر جگہ وائرل ہوتے ہیں۔ خاص کر شادیوں میں ہونے والے ڈانس کے ویڈیوز۔ حال ہی میں ایک لڑکی کا ویڈیو تیزی سے وائرل ہورہاہے جس میں وہ اپنی بہن کی شادی میں ایسا شاندار کرتی نظر آرہی ہے کہ وہاں موجود سبھی مہمان خود پر کنٹرول نہیں کرپائے اور خوشی سے چلانے لگے۔



       




      View this post on Instagram





       

      A post shared by ShaadiSaga.com (@shaadisaga)





      وائرل ہورہے ویڈیو میں آپ دیکھ سکتے ہیں کہ دلہن کی چھوٹی بہن پنجابی سانگ بجلی بجلی پر زبردست ڈانس کرتی ہوئی نظر آرہی ہے۔ لڑکی کے ڈانس اسٹیپ اتنے پرفیکٹ ہوتے ہیں کہ وہاں موجود گیسٹ اُسے چیئر کرنے سے خود کو روک نہیں پاتے ہیں۔ کہنے کا مطلب ہے کہ دلہن کی چھوٹی بہن نے اکیلے شادی کی پوری محفل ہی لوٹ لی۔

      اس ڈانس ویڈیوکو انسٹاگرام پر Shaadisaga نام کے پیج پر شیئر کیا گیا ہے۔ جس کے ساتھ انہوں نے مزیدار کیپشن بھی لکھا ہے۔ خبر لکھے جانے تک اسے اب تک ہزاروں لائیکس مل چکے ہیں۔ یہ ویڈیو لوگوں کا دل جیت رہاہے۔ یہی وجہ ہے کہ سوشل میڈیا (Social Media)پر اس ویڈیو کو اب تک کئی لوگ شیئر کرچکے ہیں۔

      ایک یوزر نے ویڈیو پر کمنٹ کرتے ہوئے لکھا ہے، ’’یہ لڑکی فل مستی کے ساتھ اپنے ڈانس کو پرفارم کررہی ہے۔ وہیں دوسرے یوزر نے کمنٹ کرتے ہوئے لکھا ہے ’سو بیوٹی فل‘۔ ‘ اس کے علاوہ کچھ یوزرس کو یہ ویڈیو اتنا پسند آیا ہے کہ انہوں نے اس کا پورا ویڈیو اپ لوڈ کرنے کو کہا ہے۔ وہیں زیادہ تر یوزرس ایموٹیکان کے ذریعے اپنا ری ایکشن دے رہے ہیں۔آپ کو بتادیں کہ بجلی بجلی گانا حال ہی میں ریلیز ہوا ہے، جو کافی وائرل ہورہا ہے۔ یہ گانا ایکٹریس شویتا تیواری کی بیٹی پلک تیواری کا ہے۔ اس گانے میں ہارڈی سندھو کے ساتھ اُن کی کیمسٹری قہر ڈھا رہی ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: