உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سلمان خان کو مارنے کیلئے لارینس بشنوئی گینگ نے تیار کیا تھا پلانB، دو بار حملہ کرنے سے بھی چوکے شوٹرس

    سلمان خان کو قتل کرنے کے لیے لارنس بشنوئی گینگ کی طرف سے تیار کردہ پلان بی نیوز 18 انڈیا کے ہاتھ لگا ہے۔ اس پورے پلان بی میں سلمان خان کو مارنے کے لیے کس طرح کا منصوبہ بنایا گیا تھا اس کا مکمل انکشاف ہو رہا ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | Mumbai
    • Share this:
      سدھو موسی والا کو قتل کرنے سے پہلے بدنام زمانہ گینگسٹر لارنس بشنوئی (Gangster Lawrence Bishnoi)  نے سپر اسٹار سلمان خان (Salman Khan)  کو مارنے کا پلان بی تیار کیا تھا۔ سلمان خان کو قتل کرنے کے لیے لارنس بشنوئی گینگ کی طرف سے تیار کردہ پلان بی نیوز 18 انڈیا کے ہاتھ لگا ہے۔ اس پورے پلان بی میں سلمان خان کو مارنے کے لیے کس طرح کا منصوبہ  بنایا گیا تھا اس کا مکمل انکشاف ہو رہا ہے۔

      ادھر اگر دیکھا جائے تو لارنس بشنوئی گینگ کے اس پلان بی سے خود سلمان خان بھی حیران رہ جائیں گے۔ دراصل سدھو موسی والا قتل کیس سے پہلے لارنس بشنوئی نے ایک بار پھر سلمان خان کو مارنے کا پلان بی تیار کیا تھا۔

      اس پورے پلان  کی قیادت کی ذمہ داری گولڈی برار اور لارنس بشنوئی گینگ کے شوٹر کپل پنڈت کے پاس تھی۔ کپل پنڈت کو حال ہی میں ہند-نیپال سرحد کے قریب سے گرفتار کیا گیا تھا۔ کپل پنڈت، سنتوش جادھو اور کچھ دوسرے شوٹر ممبئی کے وازے علاقے میں پنول میں کرائے کے کمرے میں رہنے آئے تھے۔

      ادھر بالی ووڈ سپر اسٹار سلمان خان کا فارم ہاؤس پنویل میں ہی ہے۔ اسی فارم ہاؤس کے راستے میں لارنس بشنوئی کے شوٹروں نے ریکی کرکے یہ کمرہ کرائے پر لیا تھا اور تقریباً ڈیڑھ ماہ تک یہاں رکے  رہے۔ لارنس کے ان تمام شوٹرز کے پاس اس کمرے میں سلمان خان پر حملہ کرنے کے لیے استعمال ہونے والے چھوٹے ہتھیاروں کے پستول، کارتوس وغیرہ تھے۔

      عمر میں خود سے 10 سال چھوٹی صفا بیگ سے کرکٹر عرفان پٹھان کو پہلے نظر میں ہو گیا تھا پیار۔۔

      دھماکیدار آفر! 35 ہزار روپے سے کم قیمت میں ملے گا iPhone 13، یہاں جانئے کیسے

      شوٹروں نے یہاں تک  پتہ کر لیا تھا کہ جب سے سلمان خان ہٹ اینڈ رن کیس سامنے آیا ہے، ان کی گاڑی کی رفتار بہت کم ہوتی ہے۔ یہ بھی پتہ لگا لیا تھا کہ سلمان خان جب بھی پنویل کے فارم ہاؤس پر آتے ہیں تو ان کے ساتھ زیادرہ ان کا PSO شیرا موجود ہوتا ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: