உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    دہلی ہائی کورٹ سے اداکارہJacqueline Fernandezکو ملی بڑی راحت، بیرون ملک سفر کی مشروط اجازت

    ایکٹریس جیکلن فرنانڈیز کو ملی بڑی راحت۔

    ایکٹریس جیکلن فرنانڈیز کو ملی بڑی راحت۔

    Jacqueline Fernandez: جانچ ایجنسی کی جانب سے ایڈیشنل سالیسٹر جنرل ایس وی راجو، نے کئی بنیادوں پر ایل او سی کو معطل کرنے کے ٹرائل کورٹ کے حکم پر تنقید کی۔ راجو نے کہا کہ فرنانڈیز تحقیقات سے بچنے کے لیے بھاگ سکتی ہیں اور انہوں نے تفتیش میں صحیح طریقے سے حصہ نہیں لیا ہے۔

    • Share this:
      Jacqueline Fernandez: دہلی ہائی کورٹ نے بالی ووڈ اداکارہ جیکلین فرنینڈس کو آئیفا ایوارڈز کے لیے کچھ شرائط کے ساتھ بیرون ملک جانے کی اجازت دے دی ہے۔ انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) نے مبینہ منی لانڈرنگ کیس میں اداکارہ کے خلاف لک آؤٹ نوٹس جاری کیا تھا۔

      ہائی کورٹ نے اداکارہ کو 31 مئی سے 6 جون تک ابوظہبی، متحدہ عرب امارات جانے کی اجازت دینے کے ٹرائل کورٹ کے فیصلے کے خلاف ای ڈی کی درخواست پر سماعت کی۔ جسٹس سدھیر کمار جین نے اداکارہ سے کہا کہ وہ ایک کروڑ روپے کے فکس ڈپازٹ کی رسید جمع کرائیں اور تحریری طور پر دیں کہ اگر وہ واپس نہیں لوٹتی ہیں تو ایک کروڑ روپے کی ضمانت کے ساتھ رقم ضبط کر لی جائے گی۔

      ثبوتوں سے چھیڑ چھاڑ نہیں کرنے کا حکم
      جج نے کہا کہ ٹرائل کورٹ کے فیصلے میں مداخلت کی ضرورت نہیں ہے۔ عدالت نے ای ڈی کی عرضی کو نمٹا دیا اور فرنانڈیز کو ہدایت دی کہ وہ ثبوت کے ساتھ چھیڑ چھاڑ نہ کریں اور تحقیقات میں مداخلت نہ کریں۔ ای ڈی نے پچھلے سال فرنانڈیز کے خلاف ایک لک آؤٹ سرکلر (ایل او سی) جاری کیا تھا جس میں مبینہ طور پر دھوکہ دہی کرنے والے سکیش چندر شیکھر سے منسلک 200 کروڑ روپے کی وصولی کے سلسلے میں تھا۔ فرنانڈیز سری لنکا کا شہری ہے اور 2009 سے ہندوستان میں رہ رہا ہے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      OTT Bold Actresses:یہ اداکارائیں ویب سیریزمیں پارکرچکی ہیں بولڈنیس کی حد

      یہ بھی پڑھیں:
      Shehnaaz Gill:شہناز گل کا یہ فوٹو شوٹ ہوا وائرل، تصویروں میں نظر آیا ہاٹ لُک

      جانچ ایجنسی کی جانب سے ایڈیشنل سالیسٹر جنرل ایس وی راجو، نے کئی بنیادوں پر ایل او سی کو معطل کرنے کے ٹرائل کورٹ کے حکم پر تنقید کی۔ راجو نے کہا کہ فرنانڈیز تحقیقات سے بچنے کے لیے بھاگ سکتی ہیں اور انہوں نے تفتیش میں صحیح طریقے سے حصہ نہیں لیا ہے۔ فرنانڈیز نے اس سے قبل ٹرائل کورٹ میں 15 دن کے لیے بیرون ملک سفر کرنے کی اجازت طلب کرتے ہوئے کہا تھا کہ انھیں ابوظہبی، متحدہ عرب امارات، فرانس اور نیپال میں ہونے والی تقریبات میں شرکت کی ضرورت ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: