ہوم » نیوز » انٹرٹینمنٹ

پاکستانی فنکاروں پر آئی ایم پی پی اے نے عائد کی پابندی

انڈین موشن پکچرز پروڈیوسرز ایسوسی ایشن ( آئی ایم پی پی اے)نے آج پاکستانی فنکاروں اور تکنیکی ماہرین پر پابندی لگانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ جب تک دونوں ممالک کے درمیان تعلقات معمول پر نہیں آ جاتے اس وقت تک پابندی جاری رہے گی۔

  • UNI
  • Last Updated: Sep 30, 2016 07:49 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
پاکستانی فنکاروں پر آئی ایم پی پی اے نے عائد کی پابندی
انڈین موشن پکچرز پروڈیوسرز ایسوسی ایشن ( آئی ایم پی پی اے)نے آج پاکستانی فنکاروں اور تکنیکی ماہرین پر پابندی لگانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ جب تک دونوں ممالک کے درمیان تعلقات معمول پر نہیں آ جاتے اس وقت تک پابندی جاری رہے گی۔

ممبئی : انڈین موشن پکچرز پروڈیوسرز ایسوسی ایشن ( آئی ایم پی پی اے)نے آج پاکستانی فنکاروں اور تکنیکی ماہرین پر پابندی لگانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ جب تک دونوں ممالک کے درمیان تعلقات معمول پر نہیں آ جاتے اس وقت تک پابندی جاری رہے گی۔ فلم ساز اشوک پنڈت آئی ایم پی پی اے کے نائب صدر نے ٹی پی اگروال آئی ایم پی پی اےکے صدر کا دستخط والا بیان جاری کیا ہے۔

انہوں نے کہا ہے کہ آئی ایم پی پی اے کی کل 77 ویں عام اجلاس میں متفقہ طور پر اس سے متعلق قراردادپاس کی گئی اور ارکان سے اپیل کی گئی کہ جب تک حکومت یہ نہیں کہتی کہ پاکستان کے ساتھ تعلقات معمول پر آچکےہیں تب تک پاکستان کے کسی بھی آرٹسٹ کے ساتھ کام نہ کریں۔

جموں و کشمیر کے اُري میں 18 ستمبر کو ہوئے دہشت گردانہ حملے میں 18 جوانوں کے شہید ہونے کے بعد پاکستانی فنکاروں پر یہ پابندی عائد کی گئی ہے۔ فلم اداکار سلمان خان نے پاکستانی فنکاروں کی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ وہ اداکار ہیں نہ کہ دہشت گرد۔

دہلی میں ہوئے ایک پریس کانفرنس میں مسٹر خان نے کہا کہ’دو ممالک کے درمیان امن قائم رہے یہ ایک مثالی صورت حال ہوتی ہے لیکن عمل کا ردعمل ہوا جو اب ختم ہو چکا ہے‘۔ انہوں نے ہندوستان کی کارروائی کی حمایت کی۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ 'وہ دہشت گرد نہیں بلکہ اداکار ہیں اور دونوں ہی مختلف معاملے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے فنکاروں کو ویزا دیا ہے اور انہیں یہاں کام کرنے کی چھوٹ دی ہے اور وہ لوگ یہاں مناسب دستاویزات کے ساتھ رہ رہے تھے۔

First published: Sep 30, 2016 07:49 PM IST