உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    فلم Kabul Express کی شوٹنگ کے دوران جب طالبان نے دی بم سے اڑانے کی دھمکی، جان ابراہم کو یاد آئے دہشت بھرے دن 

     حال ہی میں جان ابراہم نے افغانستان میں فلم کابل ایکسپریس کی شوٹنگ  (Kabul Express Movie)  کے دوران طالبان کی جانب سے ملنے والی دھمکیوں کو یاد کیا اور بتایا کہ کس طرح طالبان (Taliban)  کی جانب سے دھمکیاں ملنے کے بعد انہیں شوٹنگ چھوڑنی پڑی تھی۔

    حال ہی میں جان ابراہم نے افغانستان میں فلم کابل ایکسپریس کی شوٹنگ (Kabul Express Movie) کے دوران طالبان کی جانب سے ملنے والی دھمکیوں کو یاد کیا اور بتایا کہ کس طرح طالبان (Taliban) کی جانب سے دھمکیاں ملنے کے بعد انہیں شوٹنگ چھوڑنی پڑی تھی۔

    حال ہی میں جان ابراہم نے افغانستان میں فلم کابل ایکسپریس کی شوٹنگ (Kabul Express Movie) کے دوران طالبان کی جانب سے ملنے والی دھمکیوں کو یاد کیا اور بتایا کہ کس طرح طالبان (Taliban) کی جانب سے دھمکیاں ملنے کے بعد انہیں شوٹنگ چھوڑنی پڑی تھی۔

    • Share this:
      ممبئی: بالی ووڈ اداکار جان ابراہم  (John Abraham)  اپنی فلموں میں 100 فیصد دینے کے لیے جانے جاتے ہیں لیکن، انہوں نے ایسی فلم بھی کی تھی جس کی شوٹنگ انہیں درمیان میں ہی چھوڑنی پڑی تھی۔ یہ فلم 'کابل ایکسپریس' (Kabul Express) تھی، جس کی شوٹنگ کے دوران جان ابراہم، کبیر خان (Kabir Khan)  اور فلم کی باقی ٹیم کو طالبان کا سامنا کرنا پڑا تھا۔ حال ہی میں جان ابراہم نے افغانستان میں فلم کابل ایکسپریس کی شوٹنگ  (Kabul Express Movie)  کے دوران طالبان کی جانب سے ملنے والی دھمکیوں کو یاد کیا اور بتایا کہ کس طرح طالبان (Taliban)  کی جانب سے دھمکیاں ملنے کے بعد انہیں شوٹنگ چھوڑنی پڑی تھی۔

      2006 میں رلیز ہونے والی کابل ایکسپریس دو ہندوستانی صحافیوں کی کہانی ہے، جس میں ایک امریکی صحافی اور ایک افغان گائیڈ کی Imaginary کہانی بیان کی گئی ہے۔ ان دونوں کو پاکستانی فوجی یرغمال بناتے ہیں اور انہیں 48 گھنٹے کے سفر پر جنگ زدہ افغانستان میں چھوڑ دیتے ہیں۔ جان ابراہم اس فلم میں ہندستانی صحافی سہیل خان کے کردار میں تھے۔

      یہ بھی پڑھیں: یہ کیا بول گئے The Kashmir Files کے ڈائریکٹر، وویک اگنی ہوتری نے کہا، بھوپالی کا مطلب ہم جنس پرست
      انوشکا شرما کا حمل والا لک، کیا حاملہ Sonam Kapoor نے کیا کاپی؟ بی ٹاؤن کی ان مشوہر اداکاراؤں کے گھر بھی گونجنے والی ہے کلکاری

      اب حال ہی میں جان ابراہم نے افغانستان میں فلم کی شوٹنگ کے بارے میں اپنا تجربہ شیئر کیا اور یہاں کے لوگوں کے بارے میں بھی بات کی۔ Mashable India  کے ساتھ بات چیت میں جان ابراہم کہتے ہیں، 'اس وقت سوشل میڈیا نہیں تھا۔ جب ہم افغانستان سے نکل رہے تھے تو افغان لوگوں نے مجھ سے کہا، جان جان (جان کا مطلب ہے بھائی) افغانستان کے خلاف کوئی غلط  مت کہئے گا اور آج میں یہ کہنا چاہوں گا کہ افغانی لوگ سب سے خوبصورت، پیارے لوگ ہیں۔ واقعی بہت اچھے لوگ۔'
      روس۔یوکرین کی جنگ کے درمیان مسیحیٰ بنا یہ شخص، اب تک 200 بلیوں اور 60 کتوں کی بچائی جان

       

      kabul express
      @kabirkhankk)


      اس کے ساتھ ہی جان ابراہم نے فلم سے متعلق ایک واقعہ بھی یاد کیا، جب وہ کابل ایکسپریس کی شوٹنگ کے باعث افغانستان کے سابق صدر محمد نجیب اللہ کے گھر پر ٹھہرے ہوئے تھے۔ وہ کہتے ہیں- 'یہ اقوام متحدہ کا منظور شدہ ہوٹل تھا۔ میں چائے پینے کے لیے چھت پر آیا اور دیکھا کہ سامنے سے ایک راکٹ آرہا ہے اور امریکی قونصل خانے سے ٹکرایا۔ ان دنوں کونڈولیزا رائس افغانستان کے لیے امریکی وزیر خارجہ تھے۔
      IPL 2022: کرکٹ کی سب سے بڑی لیگ IPL جانئے آج سے، جانئے کس ٹیم میں کتنے اسٹار دیکھیں Full Squad

      وہ آگے کہتے ہیں- 'یہ افغانیوں کا طریقہ تھا، یہ بتانے کے لیے کہ وہ امریکیوں کے یہاں آنے سے خوش نہیں ہیں۔ یہاں ایک اور واقعہ ہوا، جس نے مجھے ہلا کر رکھ دیا۔ یہاں ایک خودکش بمبار نے ہمارے مقام پر پہنچنے سے تقریباً 6 گھنٹے قبل خود کو دھماکے سے اڑا لیا۔ ورک فرنٹ کی بات کریں تو جان ابراہم اب اٹیک میں نظر آئیں گے۔ جس میں ان کے ساتھ جیکولین فرنینڈس اور راکل پریت سنگھ نظر آئیں گے۔ اس کے علاوہ پرکاش راج، رتنا پاٹھک شاہ بھی نظر آئیں گے۔

       
      Published by:Sana Naeem
      First published: