Choose Municipal Ward
    CLICK HERE FOR DETAILED RESULTS
    ہوم » نیوز » انٹرٹینمنٹ

    بالی ووڈ کوئن کنگنا رناوت کی بڑھ سکتی ہیں مشکلات ، پولیس کو ملی ایک سنگین معاملہ کی شکایت

    شملہ پولیس کو کنگنا رناوت کے خلاف غداری اور ایس سی ایس ٹی ایکٹ کی دفعات کے تحت ایف آئی آر درج کرنے کی شکایت ملی ہے ۔ شملہ کے ایس پی نے اس بات کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ اس کے قانون پہلو اور ابتدائی جانچ کے بعد ہی معاملہ درج کیا جائے گا ۔

    • Share this:
    بالی ووڈ کوئن کنگنا رناوت کی بڑھ سکتی ہیں مشکلات ، پولیس کو ملی ایک سنگین معاملہ کی شکایت
    بالی ووڈ کوئن کنگنا رناوت کی بڑھ سکتی ہیں مشکلات ، پولیس کو ملی ایک سنگین معاملہ کی شکایت

    گزشتہ کچھ دنوں سے سشانت سنگھ راجپوت  (Sushnt Singh Rajput Death)  کی موت کے معاملہ میں بے باک رہنے والی بالی ووڈ ادکارہ کنگنا رناوت  (Kangana Ranaut) کے ایک ٹویٹ کو لے کر ان کی مشکلات بڑھ سکتی ہیں ۔ شملہ پولیس  (Shimla Police) کو کنگنا پر غداری اور ایس سی ایس ٹی ایکٹ (SC/ST Act) کی دفعات کے تحت ایف آئی آر درج کرنے کی شکایت ملی ہے ۔ شملہ کے ایس پی نے اس بات کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ اس کے قانون پہلو اور ابتدائی جانچ کے بعد ہی معاملہ درج کیا جائے گا ۔ فی الحال ٹویٹ کو لے کر قانونی رائے لی جارہی ہے ۔ بتادیں کہ سماجی کارکن اور آر ٹی آئی کارکن روی کمار نے 27 اگست کو شملہ پولیس کو ایک شکایت دی تھی ۔ اس شکایت میں روی نے کنگنا پر الزام لگایا تھا کہ انہوں نے ہندوستانی آئین پر نازیبا تبصرہ کیا ہے اور دلت سماج کو چوہا لکھ کر اس کی توہین کی ہے ۔


    شملہ کے ایس پی موہت چاولا نے شکایت ملنے کی تصدیق کی ہے ۔ ایس پی کا کہنا ہے کہ ڈھلی تھانہ کو یہ شکایت بھیجی گئی ہے ۔ ایڈیشنل ایس پی پرویر ٹھاکر اس معاملہ کو دیکھیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ پہلے یہ دیکھا جائے گا کہ جو ٹویٹ میں لکھا ہے وہ غداری یا ایس سی ایس ٹی کی دفعات کے تحت آتا ہے یا نہیں ۔ اس کو لے کر پہلے قانونی رائے لی جائے گی ۔


    ایس پی کو دی گئی شکایت میں روی کمار نے لکھا ہے کہ 23 اگست 2020 کو رات آٹھ بج کر دس منٹ پر کنگنا رناوت نے اپنے ٹویٹر اکاونٹ پر ایک ٹویٹ کیا کہ ہندوستانی آئین کی وجہ سے ملک میں ریزرویشن کے طور پر ذات پات ہے ۔ شکایت میں مزید لکھا گیا ہے کہ جب پورے دلت سماج کے لوگوں نے اس ٹویٹ کی مخالفت کی تو کنگنا نے 24 اگست کو پھر سے اپنے ٹویٹ میں چوہا لکھ کر دلتوں کی توہین کی ۔


    شملہ کے ایس پی موہت چاولا نے شکایت ملنے کی تصدیق کی ہے ۔
    شملہ کے ایس پی موہت چاولا نے شکایت ملنے کی تصدیق کی ہے ۔


    روی کمار نے مزید لکھا کہ ہندوستانی آئین کی دفعہ 13، 14 اور 15 کے تحت ذات پات کو پوری طرح سے ختم کردیا گیا ہے ۔ ہندوستانی آئین کی دفعہ 309 میں سبھی کو برابری کی نمائندگی کا حق ہے ۔ ان دفعات کے مطابق کنگنا رناوت کا یہ ٹویٹ آئین کے خلاف ہے ۔

    شکایت میں الزام لگایا گیا ہے کہ کنگنا نے جان بوجھ کر اپنے ٹویٹ سے آئین ہند کی توہین کی ہے اور دلت سماج کے لوگوں کی بھی توہین کی ہے ۔ ایسے میں کنگنا کے خلاف ایف آئی آر درج کی جائے ۔ روی نے کہا کہ یہ شکایت 27 اگست کو ایس پی کو دی گئی تھی ، لیکن ابھی تک کوئی کارروائی نہیں کی گئی ہے ۔
    Published by: Imtiyaz Saqibe
    First published: Aug 29, 2020 08:10 PM IST
    corona virus btn
    corona virus btn
    Loading