உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Bollywood Actor Education:جان ابراہم پڑھائی لکھائی میں بھی ہیں بالی ووڈ کے’ہنک‘

    بالی ووڈ اداکار جان ابراہم۔

    بالی ووڈ اداکار جان ابراہم۔

    John Abraham Education Qualification: اس فلم سے ان کی قسمت بدل گئی اور وہ راتوں رات اسٹار بن گئے۔ تاہم اس کے بعد بھی ان کا کریئر ٹریک پر نہیں آیا۔ کبھی کامیڈی میں تو کبھی ایکشن فلموں میں وہ پھنس گئے۔ پھر سال 2009 میں فلم نیویارک سے انہیں خوب داد ملی اور پھر انہوں نے پیچھے مڑ کر نہیں دیکھا۔

    • Share this:
      John Abraham Education Qualification:جان ابراہم نے اپنے کیرئیر کا آغاز بطور ماڈل کیا لیکن قسمت انہیں لائٹ کیمرہ اور ایکشن کی دنیا میں لے آئی۔فلم 'جسم' سے سنیما کی دنیا میں قدم رکھنے کے بعد جان ابراہم کے ابتدائی دن جدوجہد سے بھرے رہے۔ 'جسم' نے تو کچھ خاص نہیں کیا لیکن جان نے اپنی اداکاری سے لوگوں میں اپنی پہچان بنائی تھی۔ اس کے بعد سایا، اعتبار اور لکیر جیسی فلمیں آئیں لیکن کامیابی جان سے دور رہی۔

      سال 2004 میں جان ابراہم نے فلم دھوم میں منفی کردار ادا کیا لیکن اس کی وجہ سے وہ ہر طرف چھا گئے۔ اس فلم سے ان کی قسمت بدل گئی اور وہ راتوں رات اسٹار بن گئے۔ تاہم اس کے بعد بھی ان کا کریئر ٹریک پر نہیں آیا۔ کبھی کامیڈی میں تو کبھی ایکشن فلموں میں وہ پھنس گئے۔ پھر سال 2009 میں فلم نیویارک سے انہیں خوب داد ملی اور پھر انہوں نے پیچھے مڑ کر نہیں دیکھا۔

      کہاں تک کی پڑھائی - لکھائی؟
      جان ابراہم 17 دسمبر 1972 کو ایک پارسی گھرانے میں پیدا ہوئے۔ ان کے خاندان والوں نے انہیں اسکول کی تعلیم کے لیے ممبئی کے ورلی میں واقع بامبے اسکاٹش اسکول بھیج دیا۔ اپنے اسکول کے زمانے میں وہ بہت ذہین طالب علم تھے اور اپنی پڑھائی پر پوری توجہ دیتے تھے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Swara Bhasker Death Threat:اب سورا بھاسکرکوملی جان سے مارنے کی دھمکی،خط میں ’ساورکر‘ کاذکر

      یہ بھی پڑھیں:
      Shehnaaz Gill On Her Career:’میرا وقت چل رہا ہے‘،اپنے کرئیر پر شہناز گل نے ایسا کیوں کہا؟

      اعلیٰ تعلیم کے لیے جان نے یونیورسٹی آف ممبئی (University of Mumbai)کے جے ہند کالج (Jay Hind College)سے معاشیات میں گریجویشن کیا۔ وہ صرف گریجویشن سے مطمئن نہیں تھا اور اس نے ایم بی اے کرنے کا ارادہ کیا۔ اپنے ارادے کو پورا کرنے کے لیے اس نے ممبئی ایجوکیشنل ٹرسٹ (MET) کا رخ کیا اور وہاں سے MBA مکمل کیا۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: