உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Lock Upp :’تم ایڈلٹ فلمیں بناتی اور پرموٹ کرتی ہو؟‘ کنگنا رناوت نے پونم پانڈے کے منہ پر پوچھا سوال، ایکٹریس نے دیا ایسا جواب

    بولڈ اداکارہ پونم پانڈے سے کنگنا نے پوچھے بولڈ سوال۔

    بولڈ اداکارہ پونم پانڈے سے کنگنا نے پوچھے بولڈ سوال۔

    پونم پانڈے نے اپنے آفیشل انسٹا اکاؤنٹ (Poonam Pandey Official Instagram Account)سے شو کی ایک ویڈیو کلپ پوسٹ بھی شیئر کی۔ اس ویڈیو میں پونم پانڈے کی گرینڈ انٹری دکھائی دے رہی ہے۔ ویڈیو میں کنگنا نے سب سے پہلے پونم کا تعارف کرایا۔

    • Share this:
      ممبئی:کنگنا رناوت(Kangana Ranaut) کا متنازعہ ویب شو ’لاک اپ‘(Lock Upp) ان دنوں کافی بحث میں ہے۔ 27 فروری سے آلٹ بالاجی (Alt Balaji) پر مفت نشر ہونے والے کنگنا رناوت کے متنازعہ ویب شو (Kangana Ranaut Controversial Web Show)میں ایک سے بڑھ کر ایک کنٹیسٹنٹ (Lock Upp Contestants list)سامنے آئے ہیں۔ پونم پانڈے کا نام ان متنازعہ مشہور شخصیات کی فہرست میں شامل ہے۔ اس شو میں پونم پانڈے کی گرینڈ انٹری(Poonam Pandey Great Entry in Lock Upp) اتوار کی رات ہوئی ۔ اس کے بعد کنگنا رناوت نے اداکارہ سے براہ راست بہت بولڈ سوال کر دیا۔ اس دوران جب کنگنا رناوت نے ’ایڈلٹ فلم‘ کے بارے میں پوچھا تو پونم پانڈے نے بھی بغیر کسی ہچکچاہٹ کے اپنا جواب سامنے رکھ دیا۔



       




      View this post on Instagram





       

      A post shared by Poonam Pandey (@poonampandeyreal)





      ایک پرومو سامنے آیا ہے جس میں کنگنا نے پونم سے پوچھا تھا کہ ’آپ ایڈلٹ فلمیں بناتی ہیں اور اس کو پروموٹ کرتی ہیں؟‘ اس پر پونم نے اپنے جواب میں کہا کہ ان کی ویڈیوز اور تصاویر کسی اصول کو نہیں توڑتی ہیں۔ اداکارہ نے کہا کہ میں نے آج تک جتنے بھی ویڈیوز بنائے ہیں یا جتنے فوٹوز کلک کیے ہیں میں نے کوئی قانون نہیں توڑا ہے۔ اگر لوگ فیک پسند کرتے ہیں تو مجھے یقین ہے کہ لوگ اصلی کو بھی پسند کریں گے۔

      پونم پانڈے نے اپنے آفیشل انسٹا اکاؤنٹ (Poonam Pandey Official Instagram Account)سے شو کی ایک ویڈیو کلپ پوسٹ بھی شیئر کی۔ اس ویڈیو میں پونم پانڈے کی گرینڈ انٹری دکھائی دے رہی ہے۔ ویڈیو میں کنگنا نے سب سے پہلے پونم کا تعارف کرایا۔ کنگنا کہتی ہیں- ’بھارت ورلڈ کپ جیتتا ہے لیکن لوگ ان کے چینل پر بیٹھتے ہیں۔ لوگ انہیں سننا کم اور دیکھنا زیادہ پسند کرتے ہیں۔ آپ بھی کریں گے، دیکھئے۔‘
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: