உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Marakkar:محمد علی کنجلی مرکّر - تاریخ کے عظیم ہیرو پر بننے والی فلم نے ریلیز سے پہلے کما لیے 100 کروڑ؟

    ۔ تصویر: موہن لال، ٹوئٹر۔

    ۔ تصویر: موہن لال، ٹوئٹر۔

    اس فلم نے ایڈوانس بکنگ کے ذریعے 100 کروڑ روپے کا کلیکشن کرلیا ہے۔ آخر ایسا کیا ہے اس فلم میں کہ لاکھوں شائقین اس فلم کے منتظر ہیں؟ اور کون ہیں محمد علی کنجلی مرکّر؟ آئیے جانتے ہیں پوری تفصیل۔

    • Share this:
      ممبئی: فلم کی تاریخ میں یہ پہلا موقع ہے کہ کسی فلم نے ریلیز سے قبل ہی 100کروڑ روپے کے کلپ میں شامل ہوگئی ہے۔جنوبی ہند میں بننے والی ملیالم فلم مرکّر ’لائن آف دی عربین سی‘ (Marakkar: Lion of the Arabian Sea)نے ریکارڈ بنالیا ہے۔ سپر اسٹار موہن لال اس فلم کے مرکزی ہیرو ہیں۔ وہیں بالی ووڈ اداکار سنیل شیٹی بھی فلم میں اہم کردار ادا کرتے نظر آئیں گے۔ یہ فلم جمعرات 2 دسمبر کو سینما گھروں میں ریلیز ہوگئی ہے۔

      اس فلم کے پرویوڈسر نے دعویٰ کیا ہے کہ فلم نے صرف ایڈوانس بکنگ کے ذریعے ہی 100 کروڑ رو پئے کی حاصل کیے ہیں۔ ملیالم، تامل، تلگو، کنڑ کے علاوہ یہ فلم ہندی میں بھی ریلیز ہوگئی ہے۔ لوگ اس فلم کو دیکھنے کے لیے اتنے بے قرار ہیں کہ انہوں نے بغیر ریلیز ہی فلم کو 100 کروڑ کے کلب میں پہنچادیا۔ اس فلم کے پروڈیوسر پریہ درشن ہیں۔

      پروڈیوسر پریہ درشن پریہ درشن کی ملیالم فلم ’مرکّر: لائن آف دا عربین سی  آج 2 دسمبر کو 16،000 شو کے ساتھ بڑے پیمانے پر ریلیز ہوئی ہے۔ ریلیز سے پہلے ہی میکرس نے چونکانےو الا دعویٰ کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس فلم نے ایڈوانس بکنگ کے ذریعے 100 کروڑ روپے کا کلیکشن کرلیا ہے۔

      محمد علی عرف کنجلی مرکّر پر کیوں بنائی گئی یہ فلم ؟


      اس کی فلم کی کہانی 17ویں صدی کے کوزی کوڈ سے متعلق ہے۔جہاں محمد علی عرف کنجلی مرکّر نے کیرالا میں کالی کٹ کے بادشاہ ساموتھیری کے دور میں بحریہ کے سربراہ کا عہدہ سنبھالا تھا۔ اس فلم میں ملیالم فلم انڈسٹری کے سپر اسٹار موہن لال نے کالی کٹ خاندان کے میرین فلیٹ کے ایڈمرل محمد علی عرف کنجلی مرکّر کا کردار ادا کیا ہے جبکہ منجو واریر، ارجن سرجا بھی اس فلم میں اپنی اداکاری کے جوہر دیکھا رہے ہیں۔

      محمد علی عرف کنجلی مرکّر کو اس لیے یاد کیاجاتاہے کہ انہوں نے 1498ء میں 20 مئی کو جب واسکو ڈی گاما ایک چھوٹی سے کشتی میں سفر کرکے کوزی کوڈ کے قریب کپاد کے ساحل پر پہنچے تھے۔ پرتگال حکومت کی جنوبی ہند پر قبضہ کرنا چاہتی تھی تاہم محمد علی عرف کنجلی مرکّر نے نہ جانبازی سے واسکو ڈی گاما کا مقابلہ کیا بلکہ ان سے جیت بھی حاصل کرکے جنوبی ہند کی حفاظت کی تھی۔اس فلم میں اس عظیم ہیرو کے اسی کردار کو پردے پر فلمایا گیاہے۔


      فلم مرکّر کا ٹریلر منگل کو ریلیز کیا گیا تھا۔ اس ٹریلر کو دیکھ کر اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ یہ فلم کتنی شاندار اور زبردست ہونے جا رہی ہے۔ یہ ایک بڑے بجٹ کی فلم ہے، جس کی شوٹنگ بڑے پیمانے پر کی گئی ہے۔ اس فلم کا ٹریلر بھی موہن لال نے اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر شیئر کیا۔ اگر آپ نے ابھی تک فلم کا ٹریلر نہیں دیکھا ہے تو آپ اسے اپنی پسند کی زبان میں یہاں دیکھ سکتے ہیں۔



      فلم میں سنیل شیٹی اہم کردار ادا کریں گے۔

      اداکار سنیل شیٹی نے اپنی فلم مرکّر ’لائن آف دی عربین سی‘ ' کی پہلی جھلک اپنے سوشل میڈیا پر شیئر کی۔ اس فلم میں وہ ایک جنگجو کے کردار میں نظر آ رہے ہیں۔ وہ بڑھی ہوئی داڑھی، جسم پر لوہے کی حفاظتی ڈھال اور ہاتھوں میں تلوار لیے نظر آرہے ہیں۔ خبروں پر یقین کیا جائے تو سنیل شیٹی کا یہ روپ ہالی ووڈ فلم 'ٹرائے' سے متاثر ہے۔






      View this post on Instagram





       

      A post shared by Suniel Shetty (@suniel.shetty)





      فلم کو قومی سطح کے تین بڑے ایوارڈز مل چکے:

      ملیالم فلم ’’’مرکّر: عربی کاڈلینتے سمھم‘‘ (مرکّر: شیر بحرعرب ) Marakkar: Lion of the Arabian Sea کو قومی سطح کے تین اہم اور قابل ذکر ایوارڈ بیسٹ فیچر فلم ایوارڈ، بیسٹ اسپیشل ایفیکٹس ایوارڈ اوربیسٹ کوسٹیوم ڈیزائن ایوارڈ سے نوازا سے سرفراز کیاگیا۔

      بحریہ کے سربراہ کنجلی مرکر کے کارناموں کی بہترین عکاسی

      مرکّر: عربی کاڈلینتے سمھم نے 67 ویں نیشنل ایوارڈ میں بہترین فیچر فلم کا ایوارڈ جیتا ہے۔ اسے بہترین اسپیشل ایفیکٹس ایوارڈ سے بھی نوازا گیا۔

       


      بڑی فلمی شخصیتوں کی جانب سے حمایت اور پذیرائی

      متحدہ عرب امارت میں کی مشہور و معروف فلم پرنسٹالٹی و Phars Film کے چیئرمین  احمد کولچن نے بھی فلم مرکّر کے ریلیز پر  اس فلم کی ٹیم کو مبادکباد پیش کی ہے۔  اس سلسلہ میں موہن نے ٹوئٹ کیا کہ ’’ہم دنیا بھر کے سینما گھروں میں مرکّر کی ریلیز کے اعلان پر ردعمل سے بہت خوش ہیں۔ ہم احمد گولچن کا شکریہ ادا کرتے ہیں۔ جنہوں نے بجا طور پر اس کی حمایت کی کیونکہ ان کا پختہ یقین ہے کہ اس بڑے پیمانے پر بننے والی فلم کا تجربہ تھیٹروں میں ہونا چاہیے‘‘۔


      قومی، بین الاقوامی اور جموں وکشمیر کی تازہ ترین خبروں کےعلاوہ تعلیم و روزگار اور بزنس کی خبروں کے لیے نیوز18 اردو کو ٹویٹر اور فیس بک پر فالو کریں ۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: