உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جب شرمیلا ٹیگور کو پہلی نظر میں دل دے بیٹھے تھے نواب پٹودی

    گزرے زمانے کی ادا کارہ شرمیلا ٹیگور نے ہندی فلموں میں جو مقام حاصل کیا ہے، وہ کم ہی لوگوں کونصیب ہوا ہے۔ سال 1959 سے 1984 تک روپ ہلےپردے پر شرمیلا کی اداوں کا راج رہا ہے۔ وہ 1991 سے 2010 تک الگ انداز میں پردے پر سرگرم رہیں۔

    گزرے زمانے کی ادا کارہ شرمیلا ٹیگور نے ہندی فلموں میں جو مقام حاصل کیا ہے، وہ کم ہی لوگوں کونصیب ہوا ہے۔ سال 1959 سے 1984 تک روپ ہلےپردے پر شرمیلا کی اداوں کا راج رہا ہے۔ وہ 1991 سے 2010 تک الگ انداز میں پردے پر سرگرم رہیں۔

    گزرے زمانے کی ادا کارہ شرمیلا ٹیگور نے ہندی فلموں میں جو مقام حاصل کیا ہے، وہ کم ہی لوگوں کونصیب ہوا ہے۔ سال 1959 سے 1984 تک روپ ہلےپردے پر شرمیلا کی اداوں کا راج رہا ہے۔ وہ 1991 سے 2010 تک الگ انداز میں پردے پر سرگرم رہیں۔

    • Share this:
      گزرے زمانے کی ادا کارہ شرمیلا ٹیگور نے ہندی فلموں میں جو مقام حاصل کیا ہے، وہ کم ہی لوگوں کونصیب ہوا ہے۔ سال 1959 سے 1984 تک   شرمیلا کی اداوں کا راج رہا ہے۔ وہ 1991 سے 2010 تک الگ انداز میں پردے پر سرگرم رہیں۔

      انہیں بہترین اداکاری کے لئے دو بار نیشنل فلم ایوارڈ اور دو بار فلم فیئر ایوارڈ سے نوازا جا چکا ہے۔

      ارادھنا، امرپریم، سفر، کشمیر کی کلی، موسم، تلاش، وقت، فرار، آمنے سامنے جیسی فلمیں شرمیلا کی ادا کاری کی کہانیاں بیان کرتی ہیں۔ فلم "ان اویننگ ان پیرس" میں پہلی بار انہوں نے بکنی سین کیا، جس کے بعد توجیسے بالی ووڈ میں سنسنی چھا گئی۔

      1

      ہرطرف شرمیلا ٹیگور سرخیوں میں آگئی تھیں۔ سال 2013 میں ملک کے تیسرے سب سے اہم ایوارڈ پدم بھوشن سے نوازا جا چکا ہے۔

      2

      شرمیلا ہندوستانی فلموں کی مضبوط اداکارہ رہی ہیں۔ ان کی پیدائش حیدرآباد میں ایک ہندو بنگالی فیملی میں ہوئی تھی۔ ان کے والد گتیندر ناتھ ٹیگور برٹش ایسٹ انڈیا کمپنی میں جنرل منیجر تھے۔ ان کی ماں آسام سے تھیں، شرمیلا کی نانی نوبل انعام فاتح رویندر ناتھ ٹیگور کے بھائی دھجیجندر ناتھ ٹیگور کی ناتن تھیں۔

      3

      شرمیلا کی شادی ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان پٹوی کے نواب منصور علی خان پٹودی سے 27 دسمبر 1969 میں ہوئی تھی۔ شرمیلا کی خوبصورتی کا جادو پٹودی پر اس قدر چڑھا تھا کہ وہ انہیں دیکھتے ہی ایک ہی نظر میں اپنا دل دے بیٹھے تھے۔

      4

      شرمیلا ٹیگور بھی ان کی طرف کافی متوجہ ہوئیں اور دونوں کے درمیان ملاقاتیں بڑھنے لگیں۔ دونوں ایک دوسرے کو پیار کرنے لگے اور زندگی بھر ساتھ رہنے کا فیصلہ کیا۔

      شرمیلا کا کہنا ہے کہ وہ اپنے آنجہانی شوہر کرکٹر منصور علی خان پٹودی کی بایوپیک دیکھنا پسند کریں گی اور اس میں وہ رنبیر اور عالیہ کو دیکھنا چاہیں گی۔ عمر کے اس پڑاو پر پہنچ چکی شرمیلا آج بھی اتنی ہی خوبصورت ہیں، جتنی وہ اس زمانے میں تھیں۔

       

      First published: