உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Akansha Puri Photo:آکانکشاپوری نے پانی میں لگائی آگ، میکا سنگھ کے بھی اڑے ہوش

    آکانکشا پوری کی نئی ہاٹ تصاویر ہوئی وائرل۔

    آکانکشا پوری کی نئی ہاٹ تصاویر ہوئی وائرل۔

    Actress Akansha Puri: اکانشا پوری سوشل میڈیا پر بھی کافی مقبول ہیں اور اکثر لائم لائٹ میں رہتی ہیں۔ آپ کو بتادیں کہ انسٹاگرام پر انہیں 15 لاکھ لوگ فالو کرتے ہیں۔

    • Share this:
      Actress Akansha Puri: اکانکشا پوری ایک ایسی ہی اداکارہ ہیں جنہوں نے اپنی اداکاری کی مہارت کو جنوبی فلموں سے لے کر ہندی ٹی وی شوز تک پھیلایا ہے۔ حال ہی میں وہ اس وقت سرخیوں میں آئی تھیں جب وہ گلوکار میکا سنگھ کے ٹی وی شو 'سویمور: میکا دی ووہٹی' میں نظر آئیں اور شو کی فاتح بھی منتخب ہوئیں۔ ان سب کے علاوہ اداکارہ اپنی تصویروں کے ذریعے بھی کافی مقبولیت حاصل کرتی رہتی ہیں۔

      پانی میں لگا رہی ہیں آگ
      اکانکشا پوری سوشل میڈیا پر بھی کافی ایکٹیو رہتی ہیں اور ہمیشہ اپنی تصویروں کے ذریعے بحث چھیڑدیتی ہیں۔ ایک بار پھر ان کی ایک بہت ہی گلیمرس تصویر منظر عام پر آئی ہے۔ انہوں نے انسٹاگرام پر ایک تصویر شیئر کی ہے جس میں وہ سوئمنگ پول میں نظر آرہی ہیں اور اپنے قاتل انداز سے پانی میں آگ لگانے کا کام کررہی ہیں۔

      ان کی یہ تصویر سوشل میڈیا پر چھائی ہوئی ہے اور لوگ اسے بے حد پسند کر رہے ہیں۔ اس تصویر میں آکانکشا کا انداز ایسا ہے کہ انہیں دیکھ کر میکا سنگھ کے بھی ہوش اڑ جائیں۔



      اس طرح ہوئی تھی میکا کے سویمور میں انٹری
      غور طلب ہے کہ آکانکشا پوری میکا سنگھ کے شو 'سویمور: میکا دی ووٹی' میں وائلڈ کارڈ کے ذریعے آئی تھیں۔ اور آتے ہی سامعین پر اپنا جادو چلا دیا تھا۔ شو میں آتے ہی انہوں نے کہا تھا کہ 'بادشاہ کی ملکہ ہوتی ہے اور میں اسی ارادے سے یہاں آئی ہوں'۔ اور ایسا ہوا بھی، اس شو کو جیت کر انہوں نے میکا کی ووٹی کا خطاب اپنے نام کیا۔

      یہ بھی پڑھیں:

      سنجے لیلا بھنسالی کے ساتھ کام کرنے پرShiny Doshiکا انکشاف،کہا-یہ میرے لئے شرمناک تھا۔۔۔

      یہ بھی پڑھیں:
      کرینہ سیف کے لاڈلےTaimur Ali Khanنے دیکھی پہلی ہندی فلم، اس ایکٹر کے ہوگئے فین

      سوشل میڈیا پر ہے زبردست فین فالوونگ
      اکانشا پوری سوشل میڈیا پر بھی کافی مقبول ہیں اور اکثر لائم لائٹ میں رہتی ہیں۔ آپ کو بتادیں کہ انسٹاگرام پر انہیں 15 لاکھ لوگ فالو کرتے ہیں۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: