உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مشہور گلوکارہ مبارک بیگم کا انتقال ، آج ہوگی تدفین

    مبارک بیگم کو 1950 سے 1970 کے دوران ہندی سنیما کی دنیا میں شاندار شراکت داری کے لئے یاد کیا جاتا ہے ۔ انہوں نے بہترین موسیقاروں کے ساتھ کام کیا

    مبارک بیگم کو 1950 سے 1970 کے دوران ہندی سنیما کی دنیا میں شاندار شراکت داری کے لئے یاد کیا جاتا ہے ۔ انہوں نے بہترین موسیقاروں کے ساتھ کام کیا

    مبارک بیگم کو 1950 سے 1970 کے دوران ہندی سنیما کی دنیا میں شاندار شراکت داری کے لئے یاد کیا جاتا ہے ۔ انہوں نے بہترین موسیقاروں کے ساتھ کام کیا

    • Pradesh18
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی : مشہور گلوکارہ مبارک بیگم کا ممبئی میں پیر کی رات کو انتقال ہو گیا ہے ۔ وہ 76 سال کی تھیں ۔ آج ان کی تدفین عمل میں آئے گی ۔ وہ طویل عرصے سے بیمار چل رہی تھیں ۔ مبارک بیگم کو 1950 سے 1970 کے دوران ہندی سنیما کی دنیا میں شاندار شراکت داری کے لئے یاد کیا جاتا ہے ۔ انہوں نے بہترین موسیقاروں کے ساتھ کام کیا ۔

      کبھی تنہائيوں میں ہماری یاد آئے گی جیسے خوبصورت گیت دینے والی مبارک بیگم  بڑے بڑے میوزک ڈائریکٹروں سے لے کر محمد رفیع تک کے ساتھ کام کر چکی تھیں ۔ مبارک بیگم نے 50 کی دہائی میں اپنے کیریئر کا آغاز ریڈیو سے کیا تھا ،  لیکن جلد ہی وہ فلموں میں گانے لگیں ، اس وقت لتا منگیشکر بھی اپنے کیریئر کی شروعات کر رہی تھیں ۔

      راجستھان کی رہنے والی مبارک بیگم کو بڑا بریک فلم مدھومتی کے گانے حال دل سنائیے سے ملا ۔ فلم اس دور میں ہٹ ثابت ہوئی ۔  کردار شرما کی فلم ہماری یاد آئے گی  سے انہیں شہرت ملی اور اس کے بعد انہوں نے ایک سے بڑھ کر ایک نغمے انڈسٹری کو دیئے ۔
      First published: